Loading...
ماں|ماتر دوس|مدرس ڈے|ماترتو|ماں باپ
0

دو شبد

بدھوار,مئی14, 2008
0
1
حال ہی میں ایک متر کے گھر جانا ہوا تھا,سبھی متروں کی جوینشیلی میں لیٹنائٹ پارٹیز,ڈسکو,مستی اور وہ ساری چیزے...
1
2
پورے وشو کی جنن‍ی ہے ماں۔ اگر ایک ناری نہ ہوتی تو شائد بھگوان بھی سوچ میں پڑ جاتے که اس دنیا کی رچنا کیسے کی جائے۔...
2
3
ماں ایک انوبھوتی,ایک وشواس,ایک رشتہ نتانت اپنا سا۔ گربھ میں ابولی نازک آہٹ سے لیکر نواگت کے گلابی اوترن تک,معصوم...
3
4

خواب

شنیوار,مئی10, 2008
کل رات ہاتھوں میں نن‍ہیں سے کھ‍واب نے جن‍م لیا کھ‍واب... جس کا جن‍م آج تک نہیں ہوا کسی ماں نے کسی دادی نے...
4
4
5
سال میں ایک دن'مدرس ڈے'منا کر,اسکے لئے کچھ تحفہ لاکر یا وش کرکے بتانا۔ سماچار پتروں کے پیج بھرے دیکھ کر ماں بھی ہولے...
5
6

بیسن کی سوندھی روٹی

شنیوار,مئی10, 2008
بیسن کی سوندھی روٹی پر کھٹ‍ٹی چٹنی جیسی ماں یاد آتی ہے چوکا باسن چمٹا,پھکنی جیسی ماں بان کی کھریں کھاٹ کے اوپر ہر...
6
7

پتر ماں کے نام

شکروار,مئی9, 2008
بہت دن بیت گئے ماں سے دور بیٹی کی حالت کیا ہوتی ہے شائد اس بات کا اندازہ اس سے لگایا جا سکتا ہے که اسے محلوں کی...
7
8

میری شکتی میری ماں!

شکروار,مئی9, 2008
کیا تمہیں میری یاد نہیں آتی ہے؟ فون پر میری ماں نے مجھ سے پرشن کیا ۔ یہ بات میرے دل کو چھو گئی۔ یاد...........اس...
8
8
9
آپ مینرے لئے کسی بھگوان سے کم نہیں ہو,جس نے میری زندگی میں قدم رکھتے ہی اسے پوتر بنا دیا۔ میں نے کبھی سوچا نہیں تھا که...
9
10

اے ماں...!

شکروار,مئی9, 2008
آنچل میں تیرے مسکراتا جیون تجھ سے مہکتا سرشٹی کا اپون۔ جہاں میں تیرا نہیں کوئی ثانی فانی دنیا تجھے نہیں پہچانی۔...
10
11

بچے کی ماں

شکروار,مئی9, 2008
اس ماں کی نظر جسکی محبت کا ذکر کیا...دھندھلا سا عکس بھی نہ ہوا دیکھنا نصیب..ایک مہمان آنے والا ہے اس قدر خوش ہے...
11
12

ماں تجھے سلام

شکروار,مئی9, 2008
'ماں...کتنا پاون,کتنا نرمل کتنا پیارا کتنا کومل ہے یہ ماں کا نام کر دوں تن,من,دھن سب ارپن پھر بھی چکا سکوں...
12
13
دنیا میں یدی کوئی اپنا ہے تو وہ ماں ہے۔ ماں سے تنک بھی ومکھ یا ماں کی بھاوناؤں کو ذرا سی بھی ٹھیس پہنچانے والے پتر کو...
13
14
بچہ اپنے جنم کے بعد جب بولنا سیکھتا ہے تو سب سے پہلے جو شبد وہ بولتا ہے وہ ہوتا ہے'ماں'۔ استری ماں کے روپ میں بچے...
14
15

شفیق ماں ہے!

شکروار,مئی9, 2008
مری نگاہ اتنی معتبر کہاں تھی? که دیکھتا میں تجھ کو تیرے ادنر چیہرگی کا وہ آئینہ بھی که شپھاک سا رہا ہے ...
15
16

تیرے آنگن میں...

شکروار,مئی9, 2008
جب میں تیرے آنگن میں ایک پھول کی ماننند کھلا تو دیکھ کے مجھ کو جیتی تھی میرے آنسو پیتی تھی ماں او ماں! اکثر ڈر کر میں چھپ...
16
17
جس طرح ہم منشیہ باغ کے سب سے سندر پھول کو توڑتے ہیں,ویسے ہی اس سنسارروپی بغیا سے سب سے سندر,سب سے سگندھت اور سب سے...
17
18
سر پھرے لوگ ہمیں دشمنے جاں کہتے ہیں ہم جو اس ملک کی مٹی کو بھی ماں کہتے ہیں مجھے بس اسلئے اچھی بہار لگتی ہے که...
18
19

اس خوشی سے ونچت نہ کرو

گرووار,مئی8, 2008
ماں کا فون آیا تو صدا کی طرح چت پرسن ہو گیا۔ سویں ماں بنے ایک عرصہ ہو گیا,پر ابھی بھی ماں سے باتیں کرنے کی,انکی...
19


Web Tranliteration/Translation