Loading...
Urdu Shayari | Urdu Shayar | Ghalib Shayari |شیرو شاعری|اردو شاعری

0

غالب کی غزل:خاک ہو جا ئینگے ہم,تم کو خبر ہونے تک

شنیوار,دسمبر27, 2014
0
1
نئی دہلی۔ اردو شاعری کو دو سنسکرتیوں کے ملنے کا ذریعہ ماننے کی حامی رہی کامنا پرساد نے اب اس دشا میں ایک اور قدم...
1
2
ولی محمد ولی اس اپ مہا دیپ کے شروعاتی کلاسیکل اردو شاعر تھے۔ ولی کو اردو شاعری کے جنم داتا کے طور پر بھی جانا جاتا...
2
3
اردو شاعری بھی ہولی کے رنگوں سے بچ نہیں پائی ہے۔ اٹھارہویں صدی سے آج تک کے شاعروں نے اپنے کلاموں میں ہولی کا جو رنگ...
3
4
ایک ادیب یا ساہت‍یکار کا انجانے میں ہی نہ جانے کس کس سے رش‍تا ہوتا ہے۔ کبھی کسی کی آنکھ میں آنسو دیکھ لے تو اسکے غم...
4
4
5

دیکھ بہاریں ہولی کی

شکروار,مارچ22, 2013
جب پھاگن کے رنگ جھمکتے ہوں تب دیکھ بہاریں ہولی کی۔ اور ڈف کے شور کھڑکتے ہوں تب دیکھ بہاریں ہولی کی۔ پریوں کے رنگ دمکتے ہوں...
5
6
میں زندگی کی دعا مانگنے لگا ہوں بہت, جو ہو سکے تو دعاؤں کو بےاثر کر دے۔۔
6
7
ڈوبنے والا تھا,اور ساحل پہ چہروں کا ہجوم,پل کی موہلت تھی,میں کس کو آنکھ بھرکر دیکھتا۔۔
7
8
ہجر کی سب کا سہارا بھی نہیں اب فلک پر کوئی تارا بھی نہیں۔ بس تیری یاد ہی کافی ہے مجھے, اور کچھ دل کو گوارا بھی نہیں...
8
8
9

عزیز انصاری کی غزل

شکروار,مئی28, 2010
جھوٹھ کا لیکر سہارا جو ابر جاؤنگا, موت آنے سے نہیں شرم سے مر جاؤنگا
9
10
بہت اہم ہے میرا کام نامابر1کر دے میں آج دیر سے گھر جاؤنگا خبر کر دے
10
11

رہیے اب ایسی جگہ چلکر

سوموار,اپریل26, 2010
رہیے اب ایسی جگہ چلکر,جہاں کوئی نہ ہو,ہم سخن کوئی نہ ہو اور ہم زباں کوئی نہ ہو...
11
12
اپنی گلی میں,مجھ کو نہ کر دفن,بعد قتل ,میرے پتے سے خلق کو کیوں تیرا گھر ملے...
12
13

اشک پہ زور نہیں

منگلوار,اپریل21, 2009
نکتاچیں ہیں غمے دل اسکو سنایے نہ بنے ,کیا بنے بات,جہاں بات بنائے نہ بنے
13
14

عشق مجھ کو نہیں

بدھوار,اپریل1, 2009
عشق مجھ کو نہیں,وحشت ہی صحیح میری وحشت تیری شہرت ہی صحیح
14
15

ہزاروں خواہشیں ایسی....

سوموار,مارچ16, 2009
کہاں میخانے کا دروازہ غالب اور کہاں واعظ, پر اتنا جانتے ہیں کل وہ جاتا تھا کے ہم نکلے
15
16

کچھ پتہ تو چلے

سوموار,مارچ9, 2009
بیلچے لاؤ,کھولو زمیں کی تہیں میں کہاں دفن ہوں,کچھ پتہ تو چلے۔
16
17

لگتا نہیں ہے جی میرا

شنیوار,مارچ7, 2009
امرے دراز مانگ کے لائے تھے چار دن دو آرزو میں کٹ گئے دو انتظار میں
17
18

ہر ایک بات پہ کہتے

شکروار,فروری27, 2009
رگوں میں دوڑنے پھرنے کے ہم نہیں قائل جب آنکھ ہی سے نہ ٹپکا,تو پھر لہو کیا ہے
18
19

غزل:میر تقی میر

بدھوار,دسمبر24, 2008
الٹی ہو گئیں سب تدبیریں کچھ نہ دوا نے کام کیا دیکھا اس بیماری دل نے آخر کام تمام کیا
19


Web Tranliteration/Translation