Loading...
Sri Lanka's Decision On Terrorism Is Commendable -ایک چھوٹے سے دیپ دیش کا وراٹ فیصلہ�- Amar Ujala Hindi News Live
وگیاپن
وگیاپن

ایک چھوٹے سے دیپ دیش کا وراٹ فیصلہ

Rajesh Badalراجیش بادل Updated Sun, 12 May 2019 01:37 PM IST
شری لنکا
شری لنکا -فوٹو:سوشل میڈیا
خبر سنیں
خوبصورت سنہل دیپ-دیش شری لنکا کا یہ فیصلہ یقیناً سراہنیہ ہے که دھارمک ستھلوں کا اپیوگ آتنکواد کو سنرکشن دینے کے لئے نہیں ہونا چاہئیے۔ سرکار نے سبھی اسلامک سنستھاؤں اور مسجدوں کا سنچالن کرنے والی سمتیوں سے کہا ہے که وہ دھونی وستارک ینتروں اور اندر کی سبھی اپدیشاتمک گتیودھیوں کی ڈیو ریکارڈنگ انواریہ روپ سے ستھانیہ پرشاسن کے پاس جمع کرینگے۔ پرشاسن انکا پریکشن کریگا۔ یدی انہیں آپتیجنک پایا گیا تو اس دھارمک ستھل کے خلاف سخت کارروائی ہوگی۔ اسے ستھائی طور پر بند کیا جا سکتا ہے اور سنچالکوں کے خلاف آتنکوادیکانون کے تحت پرکرن درج ہو سکتا ہے۔
وگیاپن
وگیاپن
اس سے پہلے سرکار نے مسلم مہلاؤں کے برقعہ پہننے پر پابندی لگا دی تھی۔ شری لنکا سرکار جانچ کے بعد اس نشکرش پر پہنچی ہے که تین سپتاہ پہلے گرجا گھروں میں شرنکھلابدھ وسفوٹوں کے پیچھے اسلامی کٹٹرپنتھی سموہوں کا ہاتھ ہے۔ ان دھماکوں میں تین سو سے ادھک لوگ مارے گئے تھے اور سیکڑوں لوگ گھائل ہوئے تھے۔ یہ بھی پتہ چلا ہے که نیوزی لینڈ میں مسجدوں میں حملے کا اتر دینے کے لئے شری لنکا کے چرچوں پر آکرمن کئے گئے تھے۔ مسلم معاملوں کے منترالیہ نے زور دیکر کہا ہے که ملک میں کسی بھی دھارمک ستھل کو دہشتگردی کو پناہ دینے والا اڈہ نہیں بننے دیا جائیگا۔

دیش میں ابھی آپاتکال جاری ہے,لیکن جنجیون سامانیہ ہونے لگا ہے۔ سرکار اسلامک کٹٹرپنتھیوں کو اسی طرح ابھیان چلاکر ختم کرنا چاہتی ہے,جس طرح لٹے اگروادیوں کا صفایا کیا گیا تھا۔ غورطلب ہے که ایک پکھواڑے پہلے آئییسائییس نے ان حملوں کی ذمیداری لی تھی۔ اچھی بات ہے که شری لنکا کے مسلم سمودائے نے اپنے کو اس طرح کی حرکتوں سے ایک دم الگ کر لیا ہے۔ حالانکہ اسکے اور کھل کر سامنے آنے کی آوشیکتا ہے۔ شری لنکا سرکار نے اپنی لاپرواہی سے سبق لیا ہے۔ خفیہ رپورٹوں نے پہلے ہی آگاہ کر دیا تھا۔ لیکن شیرش سطروں پر اس چیتاونی کو نہیں بتایا گیا۔

راشٹرپتی اور پردھان منتری کے الگ الگ گٹ اور دل ہونے کے کارن پرشاسن وہاں سینڈوچ بن گیا ہے۔ دو پاٹوں کے بیچ پس رہی نوکر شاہی اور جنتا اس سے ترست ہے۔ پردے کے پیچھے سے چین اسکا فائدہ اٹھا رہا ہے۔ شری لنکا سرکار کی ستھتی سانپ چھچھوندر جیسی ہو گئی ہے۔ ہمبنٹوٹا بندرگاہ پر چین کا نینترن ہونے کے بعد وہ شری لنکا کے آنترک معاملوں میں بھی دخل اندازی کر رہا ہے۔ انگلی پکڑنے کے بعد وہ شری لنکا کی کلائی پکڑنا چاہتا ہے۔ راشٹرپتی مہندرا راج پکشے چین کی گود میں بیٹھے ہوئے ہیں۔ ایسے میں پردھان منتری رانل وکرمسنگھے کیا کر سکتے ہیں? 

چرچوں پر حملے کی سوچنا راشٹرپتی کے دفتر کو تھی۔ وہ پردھان منتری کاریالیہ کو نہیں بھیجی گئی۔ آپ کو یاد ہوگا که نیوجیلینڈ میں مسجدوں پر حملہ کرنے والا بھی چین کے راستے ہی پاک ادھیکرت کشمیر پہنچا تھا۔ اسنے وہاں ہتھیاروں کا آدھنکیکرن کرایا تھا۔ اس علاقے میں ان دنوں چین کی سینا کا قبضہ ہے,جو گوادر تک کارڈور بنا رہی ہے۔ ایسے میں چین کے دوہرے چرتر پر بھی کوٹنیتک شنکا ہوتی ہے۔ شری لنکا سرکار کے دونوں شکھر پرشوں کو اس معاملے میں ایک جٹتا دکھانی ہوگی انیتھا آنے والے دنوں میں بھی اس طرح کے حملوں کی آشنکا نکاری نہیں جا سکتی۔

ہندوستان کے لئے بھی یہ خطرے کی گھنٹی ہے۔ ایک چھوٹا ملک جو چاروں طرف پانی سے گھرا ہو,وہ تو اپنی گھیرا بندی اور چوکسی سخت کر سکتا ہے۔ مگر بھارت کے معاملے میں ایسا نہیں ہے۔ پاکستان,چین,نیپال اور بانگلادیش کی سیماؤں سے آتنکوادیوں کی گھس پیٹھ ہوتی رہی ہے۔ ان دیشوں میں بھارت ورودھی بھاوناؤں کو ہوا دی جاتی ہے۔ اسکے علاوہ بھارتیہ راجنیتی جس شرمناک دور سے گزر رہی ہے,وہ ودیش اور رکشا نیتی کے جانکاروں کے لئے کٹھن چنوتی ہے۔

وڈمبنا ہے که ہندوستان کے راجنیتا سوچتے ہیں که ہماری سوتنترتا ایک ایسے ابھیدیہ اور اجییکلے میں سرکشت ہے,جس پر کبھی کوئی سنکٹ نہیں آئیگا۔ اس کارن وہ سیاست کو ایک اراجک موڑ تک لے جانے میں بھی نہیں ہچکچا رہے ہیں۔ شری لنکا کوئی آدرش نہیں ہے,لیکن کچھ تو ہمیں اس سندر دیپ دیش سے سیکھنے کی ضرورت ہے۔

Recommended

Uttarakhand Board 2019کے پریکشا پرنام جلد ہو نگے گھوشت,دیکھنے کے لئے کلک کریں
Uttarakhand Board

Uttarakhand Board 2019کے پریکشا پرنام جلد ہو نگے گھوشت,دیکھنے کے لئے کلک کریں

وواہ میں آ رہیں اڑچنوں اور بادھاؤں کو دور کرنے کا پائیں سمادھان وشوپرسدو جیوتشاچاریو سے
جیوتش سمادھان

وواہ میں آ رہیں اڑچنوں اور بادھاؤں کو دور کرنے کا پائیں سمادھان وشوپرسدو جیوتشاچاریو سے

وگیاپن
وگیاپن
امر اجالا کی خبروں کو فیس بک پر پانے کے لئے لائق کریں
وگیاپن

Spotlight

وگیاپن
وگیاپن
وگیاپن

لوک سبھا چناؤ کے نتیجوں سے ایک دن پہلے شیئر بازار میں آیا اچھال سمیت5بڑی خبریں

امر اجالا ڈاٹ کام پر دیش دنیا کی راجنیتی,کھیل,کرائم,سنیما,فیشن اور دھرم سے جڑی خبریں۔

22مئی2019

آج کا مدعا
View more polls

Disclaimer

اپنی ویب سائٹ پر ہم ڈاٹا سنگرہ ٹولس,جیسے کی ککیج کے مادھیم سے آپکی جانکاری ایکتر کرتے ہیں تاکہ آپ کو بہتر انبھو پردان کر سکیں,ویب سائٹ کے ٹریفک کا وشلیشن کر سکیں,کانٹینٹ ویکتیگت طریقے سے پیش کر سکیں اور ہمارے پارٹنرس,جیسے کیGoogle,اور سوشل میڈیا سائٹس,جیسے کیFacebook,کے ساتھ لکشت وگیاپن پیش کرنے کے لئے اپیوگ کر سکیں۔ ساتھ ہی,اگر آپ سائن اپ کرتے ہیں,تو ہم آپ کا ای میل پتہ,فون نمبر اور انیہ وورن پوری طرح سرکشت طریقے سے سٹور کرتے ہیں۔ آپ ککیج نیتی پرشٹھ سے اپنی ککیج ہٹا سکتے ہے اور رجسٹرڈ یوجر اپنے پروفائل پیج سے اپنا ویکتیگت ڈاٹا ہٹا یا ایکسپورٹ کر سکتے ہیں۔ ہماریCookies Policy, Privacy PolicyاورTerms & Conditionsکے بارے میں پڑھیں اور اپنی سہمتی دینے کے لئےAgreeپر کلک کریں۔

Agree
Election
Web Tranliteration/Translation