Loading...
Sirsa News: Latest Sirsa News In Hindi,سرسہ نیوز ان ہندی- Amarujala.com
وگیاپن
وگیاپن
وگیاپن
سمسیا کیسی بھی ہو,پائیں اسکا اچوک سمادھان پرسدھ جیوتشاچاریوں سے کیول99روپے میں
Astrology Services

سمسیا کیسی بھی ہو,پائیں اسکا اچوک سمادھان پرسدھ جیوتشاچاریوں سے کیول99روپے میں

وگیاپن
وگیاپن
وگیاپن
وگیاپن
وگیاپن

خون سے پتر لکھ کر ساموہک گرفتاریاں دینگے شکشا پریرک,آمرن انشن کی چیتاونی

ہریانہ کے51سو شکشا پریرک روزگار بچاؤ ابھیان کے تحت28اگست کو خون سے پتر لکھ کر ساموہک گرفتاریاں دینگے۔

26اگست2019

وگیاپن
وگیاپن

سرسہ

سوموار, 26اگست2019

اویوستھاؤں پر نیشنل کالج میں ودیارتھیوں نے کیا ککشاؤں کا بہشکار

نیشنل کالج میں بیتے دن پڑھائی کے دوران پنکھا گرنے سے5ودیارتھیوں کو چوٹ لگنے کے معاملے میں بدھوار کو کالج ودیارتھیوں نے ککشاؤں کا بہشکار کرتے ہوئے کالج پرشاسن کے خلاف ورودھ پردرشن کیا۔
ودیارتھیوں کا کہنا ہے که پچھلے کافی سمیہ سے کالج میں پنکھوں و واٹر کولر کی پریشانی کو لیکر کالج پراچاریہ کو اوگت کروا چکے ہیں۔ بیتے دن ہوئی گھٹنا کے کچھ گھنٹے پہلے ہی ودیارتھی دوارہ پراچاریہ کے غیر حاضری میں انکے پیئے کو گیاپن سونپا تھا۔ گیاپن سونپنے کے ایک گھنٹے بعد ہی وگیان سنکائے میں ککشا لگا رہے ودیارتھیوں کے اوپر پنکھا گر گیا۔
چھاتر پنکج کھچڑ,سندیپ جاکھڑ,روی چھمپا,انکت مہتہ,منوج ورما,امت سہارن,راج والمیکی نے کہا که باربار کالج پرشاسن کو سمسیاؤں سے اوگت کروانے کے بعد بھی کالج پرشاسن کی کاریہ کی رفتار دھیمی چل رہی ہے۔ اسی کارن کالج میں یہ حادثہ ہوا۔ ودیارتھیوں نے کالج پرشاسن کے ورودھ سوروپ ککشاؤں کا بہشکار کیا۔ کالج پراچاریہ نے ودیارتھیوں کو بات چیت کے لئے بلایا۔ ودیارتھیوں کا کہنا تھا که کالج کی ککشاؤں میں لگے پنکھے کنڈم ہیں۔ جو ککشاؤں میں پنکھے لگے ہیں وہ ماڈل ہی بند ہو گئے ہیں۔
پرنسپل نے چھاتروں سے کنڈم پنکھوں کی سوچی مانگی
پراچاریہ نے کہا که مجھے ان ککشاؤں کی سوچی بناکر دیں جن میں پنکھے کنڈم ہیں۔ اسی سوچی کو بجلی کرمچاری کو دینگے تاکہ پنکھوں کو ٹھیک کیا جا سکے۔ چھاتروں نے کہا ککشاؤں میں تاروں کی رپییر کرکے اسے کھلا چھوڑ دیا جاتا ہے۔ انہیں ٹھیک پرکار سے کور تک نہیں کیا جاتا۔ اگر کسی ودیارتھی کے ساتھ درگھٹنا ہوتی ہے تو اسکا جمیوار کون ہوگا۔ پراچاریہ نے کہا که ایک ہفتے میں سبھی سمسیاؤں کا حل ہو جائیگا۔ ککشاؤں کے پنکھوں کو بدلنے کی ضرورت ہے تو بدل دیا جائیگا۔
چھاتروں دوارہ ککشاؤں میں لگے خراب پنکھوں کی سوچی تیار کر دی جائیگی۔ اسی سوچی کے انوسار کاریہ کیا جائیگا۔ اگر پنکھوں کو بدلنے کی ضرورت پڑی تو انہیں بدل دیا جائیگا۔
-رام کمار جانگڑا,پراچاریہ نیشنل کالج,سرسہ۔
... اور پڑھیں

کورٹ چناؤ میں باجوا اور ایسی چناؤ میں ہڈا کو ملے سب سے زیادہ ووٹ

سیڈیئیلیو میں منگلوار کو کاریہ کاری پریشد(ایسی)اور کورٹ کے چناؤ سمپن ہوئے۔ کورٹ کے چناووں میں ماس کمیونیکیشن وبھاگ کے پرادھیاپک ڈا.سیوا سنگھ باجوا کو سب سے ادھک31مت ملے۔ جبکہ کاریہ کاری پریشد کے چناووں میں ڈا.شیلیندر ہڈا کو سب سے ادھک25مت ملے۔ کل38پرادھیاپکوں نے متدان میں بھاگ لیا۔ لیکن ایک پرادھیاپک کا بیلٹ پیپر ردّ کر دیا گیا۔ ایسے میں37پرادھیاپکوں کے متوں کی گننا ہوئی۔ کورٹ کے چناؤ میں ایک پرادھیاپک ادھکتم پانچ کو ووٹ ڈال سکتا ہے۔
منگلوار کو سیڈیئیلیو میں کورٹ اور کاریہ کاری پریشد کے چناووں میں قریب42اسسٹینٹ اور ایسوسئیٹ پروفیسر کے پاس متدان کا ادھیکار تھا۔ اس میں سے قریب38نے متدان کیا۔ رجسٹرار راکیش ودھوا رٹرننگ آفیسر تھے۔ انکی دیکھ ریکھ میں چناؤ شروع ہوئے۔ ووٹنگ صبح دس بجے شروع ہوئی اور ایک بجے تک ہوئی۔ قریب دو بجے چناؤ پرنام گھوشت کئے گئے۔ کورٹ کے پانچ سدسیوں میں ڈا.سیوا سنگھ کو سب سے ادھک31,ڈا.نیلم کماری کو29,ڈا.سندیپ کو27,ڈا.رنجیت کور کو26مت اور ڈا.انجو دلال کو20مت حاصل ہوئے۔ یہ پانچوں سدسیہ کورٹ کے چنے گئے۔ جبکہ مکیش گرگ کو19مت ملے۔ سب سے کم مت ہونے کے کارن وہ ہار گئے۔ وشوودیالیہ کورٹ میں بجٹ پاس کیا جاتا ہے۔ پچھلے وت ورش کا لیکھا جوکھا بھی پرستت کیا جاتا ہے۔
ایسی کے سدسیہ بنے شیلیندر ہڈا اور ایشور ملک
کاریہ کاری پریشد کے دو سدسیوں کے چناؤ کے لئے شیلیندر ہڈا,ایشور ملک,ہریش کمار اور سنجو بالا چناوی میدان میں ہے۔ رزلٹ میں ڈا.شیلیندر ہڈا کو25,ڈا.ایشور ملک کو22,ڈا.سنجو بالا کو15اور ڈا.ہریش روہل کو13مت ملے۔ ڈا.شیلیندر ہڈا اور ڈا.ایشور ملک ایسی کے سدسیہ چنے گئے۔ ایسی کے چناؤ میں ایک پرادھیاپک ادھک سے ادھک دو کو ووٹ ڈال سکتا ہے۔ کاریہ کاری پریشد وشوودیالیہ کی سپریم باڈی ہوتی ہے,جسمیں ٹیچنگ اور نان ٹیچنگ کی پدونتی,نیتی گت فیصلے کئے جاتے ہیں۔ کاریہ کاری پریشد کی سال میں کم سے کم دو میٹنگ ضروری ہوتی ہیں۔ کورٹ کی میٹنگ سال میں ایک بار اوشیہ ہونی چاہئیے۔
چناؤ شانتی پورن سمپن ہوئے۔ سبھی سدسیوں نے پورا سہیوگ دیا۔ کل38نے ووٹنگ میں حصہ لیا۔ لیکن ایک پرادھیاپک کا مت ردّ کر دیا گیا۔
-راکیش ودھوا,رجسٹرار,سیڈیئیلیو۔
... اور پڑھیں

شکشا ندیشالیہ نے ڈی ای او کو سکول پرنسپل اور دو ادھیاپکوں پر ایف آئی آر درج کروانے کے دیئے نردیش

شہر کے ایک سرکاری سکول میں پڑھنے والی چھاترا اور سکول کے ہی ایک شکشک کے موبائل فون پر اشلیل بات چیت کا ڈیو وائرل ہونے کے معاملے میں نیا موڑ آیا ہے۔ شکشا ندیشالیہ نے جلا شکشا ادھیکاری کو سکول پراچاریہ انل گپتا تتھا شکشک پھول سنگھ,پروین کمار کے خلاف ایف آئی آر درج کروانے کے نردیش دیئے ہیں۔ حالانکہ آروپی شکشک پروین کمار کے خلاف پہلے ہی معاملہ درج ہو چکا ہے۔ شکشا ندیشالیہ نے منگلوار کو جلا شکشا وبھاگ کے پاس پتر بھیج دیا ہے۔ شکشا ندیشالیہ نے یہ نردیش ایس ڈی ایم دوارہ ڈی سی کے مادھیم سے بھیجی گئی رپورٹ کے آدھار پر لیا ہے۔ معاملے میں آروپ تھا که سکول پرنسپل نے شکایت پر سنگیان لینے میں دیری برتی تھی۔ جبکہ دوسرے ادھیاپک پھول سنگھ کی بھومکا بھی سندگدھ پائی گئی تھی۔
یہ تھا معاملہ
شہر کے ایک سکول میں پڑھنے والی چھاترا اور سکول کے ہی ایک شکشک پروین کمار کے ساتھ اشلیل ڈیو وائرل ہونے کے معاملے کی جانچ کرنے کے لئے ڈی سی سرسہ کے نردیش پر پانچ اگست کو ایس ڈی ایم سرسہ شالنی چیتل اور جلا شکشا ادھیکاری راجیش چوہان سکول میں پہنچی۔ اس دوران انہوں نے سکول پرنسپل,سکول سٹاف سدسیوں,سکول کی ککشا نونوی سے بارہویں تک کی چھاتراؤں کے بیان درج کئے۔ وہیں اس دوران جلا بار کونسل کے پورو پردھان جیپیئیس کنگرے نے لوگوں کے ساتھ سکول میں دھرنا دیا اور آروپی ادھیاپک کے خلاف پولیس کارروائی کے لئے ایس پی اور ڈی سی کو لکھا۔ آروپی شکشک پروین کمار کے خلاف پوکسو ایکٹ کے تحت معاملہ درج کیا گیا تھا۔
... اور پڑھیں

کار سوار تین نشہ تسکروں سے25گرام ہیروئن برآمد

سی آئی اے سرسہ پر بھاری انسپیکٹر روندر کمار کی ٹیم نے نشہ تسکروں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے وشیش ابھیان کے تحت گست کے دوران آئی ٹین کار میں سوار تین نشہ تسکروں کے قبضے سے25گرام ہیروئن برآمد کرنے میں سپھلتا حاصل کی ہے۔
پکڑے گئے نشہ تسکروں کی پہچان سریش واسی رامپرا بگڑیا,روہتاش واسی ڈنگ منڈی و وکاش عرف رانجھا واسی جودھکاں کے روپ میں ہوئی ہے۔ پولیس نے آروپیوں و سپلایر کے خلاف تھانہ ڈنگ میں مادک پدارتھ ادھنیم کے تحت ابھیوگ درج کر سپلایر کی تلاش شروع کر دی ہے۔ سی آئی اے سرسہ انچارج انسپیکٹر روندر کمار کی ایک ٹیم سہایک اپ نریکشک ترسیم سنگھ کے نیترتو میں گست کے دوران ڈنگ سے میہوالا کی طرف جا رہی تھی که ریلوے انڈربرج کی طرف سے ایک آئی ٹین کار آتی دکھائی دی۔ سامنے پولیس کی گاڑی دیکھ وہ کار پیچھے موڑکر واپس گھمانے کی کوشش کرنے لگے۔ سی آئی اے ٹیم نے شک کی بناہ پر کار سوار تینوں یووکوں کو کار سہت قابو کر لیا۔ سی آئی اے ٹیم نے کار کی تلاشی لی تو کار کے ڈیش بورڈ کے اندر سے25گرام ہیروئن برآمد ہوئی۔ جس پر آروپیوں کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا۔ پکڑی گئی ہیروئن کی قیمت انترراشٹریہ بازار میں2لاکھ50ہزار روپے آن کی گئی ہے۔
... اور پڑھیں

پیسے کے لینے دین کو لیکر ایک دوست نے دوسرے دوست کو ماری گولی,ہتیا کا معاملہ درج

ادھار دیئے گئے پانچ لاکھ روپے کے لین دین کو لیکر شنیوار رات کو قریب10بجے حصار روڈ دہلی پل پر دو دوستوں کے بیچ تکرار ہو گئی۔ تکرار اتنی بڑھ گئی که ایک دوست نے پسٹل نکال کر دوسرے دوست کو گولی مار دی۔ گولی یووک روجوت کے کولھے میں لگی۔ اسکی گمبھیر حالت کو دیکھ کر اسے حصار ریفر کیا گیا۔ لیکن رقت ستراو ادھک ہونے کے کارن یووک کی رویوار دوپہر موت ہو گئی۔ پولیس نے روجوت کے بڑے بھائی سربپال کی شکایت انوسار روجوت نے پانچ لاکھ روپے امریک سنگھ کو ادھار دیئے تھے۔ اسی کے وواد میں امریک نے گولی چلا دی۔ امریک سنگھ کے خلاف ہتیا کا معاملہ درج کیا ہے۔ فی الحال آروپی فرار چل رہا ہے۔ مرتک روجوت دہلی گردوارہ پربندھک کمیٹی کے پورو ادھیکش و بھاجپا ودھایک منجندر سنگھ سرسہ کا بہنوئی ہے۔ بہنوئی کی موت کی خبر سن کر منجندر سنگھ سرسہ پہنچے۔
سرسہ کے علی پور ٹیٹوکھیڑا گاؤں کا رہنے والا روجوت سیکھوں شیتر کے نامی گرامی پریوار سے سمبندھ رکھتا ہے۔ شنیوار کو وہ اپنے دوست شاہ پور بیگو نواسی امریک سنگھ سندھو کے ساتھ کسی انیہ دوست کی پارٹی سے لوٹ کر آ رہا تھا۔ رات قریب10بجے کے آس پاس دہلی پل پر دونوں میں پیسوں کے لین دین کو لیکر وواد ہو گیا۔ روجوت نے امریک سنگھ کو پانچ لاکھ روپے ادھار دیئے ہوئے تھے۔ تکرار بڑھنے پر امریک نے روجوت سیکھوں پر گولی چلا دی۔ گولی لگنے کے بعد روجوت نے گھٹنا کی جانکاری پرجنوں کو دی۔ جہاں سے اسے سول اسپتال میں لایا گیا۔ چکتسکوں نے اسکی حالت کو دیکھ کر اسے حصار ریفر کر دیا۔ حصار میں اسے ایک نجی اسپتال میں بھرتی کرایا گیا۔ اس دوران روجوت پرجنوں سے اپنی جان بچانے کی گہار کر رہا تھا۔ سول لائن تھانے کو واردات کی سوچنا ملنے پر ایس ایچ او امت بینیوال نے رات کو گھٹناستھل کا نریکشن کیا۔ آس پاس کی ڈھانیوں میں پولیس نے آروپی امریک کو پکڑنے کے لئے سرچ ابھیان چلایا۔ لیکن وہ پولیس کی پکڑ سے دور رہا۔
حصار میں دوپہر ایک بجے توڑا دم
روجوت کا حصار کے پرائیویٹ اسپتال میں علاج چل رہا تھا۔ گولی اسکے کولھے کے اندر ہی رہ گئی۔ رات میں روجوت کی حالت اور بگڑ گئی جس سے دوپہر کو اسنے دم توڑ دیا۔ سول لائن پولیس نے شو کا حصار میں ہی پوسٹ مارٹم کرواکر پرجنوں کو سونپ دیا۔ شام کو گاؤں علی پور ٹیٹوکھیڑا میں روجوت کا انتم سنسکار کر دیا گیا۔ جسمیں شہر کی نامی گرامی ہستیاں شامل ہوئیں۔
ریاڈ پریوار میں ہوئی تھی روجوت کی شادی
روجوت سیکھوں سیڈیئیلیو سے آل گریجو ایٹ تھا۔2008میں اسنے آل کی تھی۔ روجوت کے کالج سمیہ کے ساتھی اسکی موت کی بات سن کر ہکے بکے رہ گئے۔ روجوت سیکھوں کی شادی سرسہ کے حصار روڈ پر باجیکاں گاؤں کے ریاڈ پریوار کی بیٹی چنپریت کے ساتھ ہوئی تھی۔ جو که دہلی کے بھاجپا شئد ودھایک منجندر سنگھ سرسہ کی چچیری بہن ہے۔ روجوت کی سسرال گاؤں باجینکا میں ہے۔ روجوت کی موت کی خبر سن کر منجندر سنگھ حصار سے ہوکر سرسہ پہنچے۔ روجوت سیکھوں کی پتنی چنپریت سیڈیئیلیو میں یونیورسٹی کالج میں پرادھیاپکا ہے۔
دس سال کا یارانہ تھا روجوت اور امریک کا
جانکاری انوسار روجوت اور امریک کا پچھلے دس سالوں سے یارانہ تھا۔ دونوں ایک ساتھ ہی رہتے تھے۔ روجوت سمبھرانت پریوار سے سمبندھ رکھتا تھا۔ آل گریجو ایٹ ہونے کے بعد حالانکہ اسنے وکالت شروع نہیں کی اور اپنی پشتینی زمین جائداد ہی سمبھالتا تھا۔ وہ دونوں بھائیوں میں چھوٹا تھا۔ لیکن امریک کی آرتھک ستھتی پچھلے کچھ سالوں سے گرتی جا رہی تھی۔ وہ شاہ پور بیگو کا ہی رہنے والا تھا۔ سرسہ کی اناج منڈی میں اسنے مالوہ ٹریڈنگ کمپنی کے نام سے آڑھت کا بھی کام کیا۔
مرتک کے بھائی سربپال کی شکایت کے انوسار پانچ لاکھ رپیوں کے لین دین کو لیکر ہی آروپی امریک نے روجوت پر گولی چلائی ہے۔ امریک کے خلاف ہتیا کا معاملہ درج کر لیا گیا ہے اور اسکی تلاش کی جا رہی ہے۔
امت بینیوال,تھانہ پر بھاری سول لائن سرسہ۔
... اور پڑھیں

پنچکولہ ہنسا آگجنی کے دو سال ہوئے پورے,نہ سبھی مجرم پکڑے گئے اور نہ کسی کو ملا معاوضہ

پنچکولہ ستھت ڈسٹرکٹ کورٹ سے ڈیرا سچا سودا پرمکھ رام رحیم کو دوشی ٹھہرائے جانے کے بعد بھڑکی ہنسا کےدو سال پورے ہو گئے,لیکن ابھی بھی آگجنی کروانے والے کئی آروپی فرار ہیں۔

اسکے علاوہ ان ہزاروں لوگوں کے جکھم بھینہیں بھرے ہیں,جنہوں نے آگجنی میں اپنی کروڑوں کی سمپتی کو اپنی آنکھوں کے سامنے جلتے دیکھا۔ اس مورچے پر ہریانہ سرکار بھی پیڑتوں کو معاوضہ دینے میں پیچھے رہی ہے۔ نتیجۃً ادھکانش کیس ابھی بھی عدالت میں وچارادھین ہیں۔

کروڑوں کے نقصان کی نہیں ہوئی بھرپائی
گرمیت رام رحیم کو دوشی قرار دیئے جانے کے بعد پنچکولہ میں کی گئی ہنسا میں لوگوں کو انکے کروڑوں کے نقصان کا معاوضہ اب تک نہیں ملا ہے۔ لوگوں کے جلے واہن آج بھی تھانہ چنڈیمندر میں کھلے پڑے ہیں,لیکن پیڑتوں کو نہ تو معاوضہ ملا اور نہ ہی کوئی سرکاری مدد۔

ہنسا معاملے میں پولیس نے کل177ایف آئی آر درج کی تھی,ان میں1137آروپیوں کو اریسٹ کیا گیا تھا۔ پولیس کو جانچ میں پختہ ثبوت نہیں ملنے پر10معاملوں میں درج ایف آئی آر میں نامزد قریب100آروپیوں سے دیشدروہ کی دھارا ہٹانی پڑی۔ ثبوتوں کے ابھاؤ میں دو معاملوں میں آروپیوں کو بری کیا گیا۔
... اور پڑھیں

وبھاگ نے134اے کے تحت داخلہ لینے والے ودیارتھیوں کے پنجیکرن میں ترٹیاں ٹھیک کرنے کا دیا ایک اور اوسر

شکشا ندیشالیہ نے نیم134اے کے تحت پنجیکرن کروا چکے ودیارتھیوں کی فیس کا بھگتان کرنا ہے۔ لیکن فیس بھگتان سے پہلے سبھی ودیارتھیوں کی سوچی جاری کر جلا شکشا مولک ادھیکاری سے پنجیکرت ڈاٹا کو جانچنے کے نردیش دیئے ہے۔ ندیشالیہ نے بیتی21اگست کو سبھی جلا شکشا مولک ادھیکاریوں کو اس سمبندھ میں پتر جاری کیا ہے۔
سرسہ میں نیم134اے کے تحت ضلعے میں قریب چار ہزار سیٹیں تھی۔ پریکشا میں2654بچے پاس ہوئے تھے۔ اب شکشا ندیشالیہ دوارہ ودیارتھیوں کی سوچی جاری کر پرتیک ودیارتھی کا ڈاٹا جانچنے و کسی بھی ودیارتھی کے ڈاٹا میں کوئی تررٹی پائی جانے پر اسے ٹھیک کر نیم134اے کی ویب سائٹ پر اپ لوڈ کرنے کے نردیش جاری کئے ہیں۔ پتر کے انوسار نیم134اے کے انترگت شکشا گرہن کر رہے ودیارتھیوں کی ویرپھائی سوچی مانگی ہے۔ شکشا وبھاگ نے پتر جاری کرتے ہوئے کہا ہے که ودیارتھیوں نے داخلہ پرکریا پورن کر لی گئی ہے۔ ان ودیارتھیوں کو نیم134اے انترگت فیس پرتپورتی راشی آونٹت کی جائیگی۔ نیم134اے کے انترگت داخلہ لے چکے ودیارتھیوں کی سوچی ایمائییس پورٹل پر ڈال دی گئی ہے۔ اچ شکشا وبھاگ دوارہ ضلعے کے سبھی مولک ادھیکاریوں و شکشا ادھیکاریوں کو سوچی جانچ کرنے کے آدیش دیئے ہے۔ اگر کسی ودیارتھی کا داخلہ ہو چکا ہے اور اسکے دستاویزوں میں نام اتھوا ککشا کرمانک میں کوئی ترٹی کے کارن پنجیکرن نمبر نہیں ملا ہے وہ اسکے سدھار کے لئے26اگست تک134اے کے انترگت[email protected]پر سوچت کر ٹھیک کروایا جا سکتا ہے۔ انتم تتھی تک جو سوچنا ایمائییس پورٹل پر موجود ہوگی۔ اسی سوچنا کو انتم مانتے ہوئے اسی سوچی پر فیس کا بھگتان کرنا آنربھ کر دیا جائیگا۔
ساتوں کھنڈوں کے بیئیؤ کو غلط ڈاٹا کو ٹھیک کر آن لائن کرنے کے نردیش جاری کر دیئے ہے۔ نردھارت سمیہ سے پہلے ہی ویرپھکیشن کر ڈاٹا اپ لوڈ کر دیا جائیگا۔
--دھن پت رام,جلا مولک شکشا ادھیکاری,سرسہ۔
... اور پڑھیں

فرجی دستاویز دکھاکر بجاج فائنینس کمپنی کو لگایا1.97لاکھ کا چونا

فرجی دستاویزوں کے آدھار پر لون لیکر کمپنی کو چونا لگانے کے آروپ میں بجاج فائنینس کمپنی کے ادھیکاری نے شہر تھانہ پولیس کو دو لوگوں کے خلاف شکایت دی ہے۔ پولیس کو دی شکایت میں مینپری,اترپردیش نواسی واسدیو نے بتایا که وہ بجاج فائنینس کمپنی کے تحت سرسہ میں ڈبوالی روڈ پر ستھت کاریالیہ میں ادھیکرت ادھیکاری ہے۔ اسنے بتایا که کمپنی نے دیش بھر میں اپنے کاریالیہ کھولے ہوئے ہیں۔ واسدیو نے بتایا که شہر کے بیگو روڈ ستھت پریت نگر نواسی وشال و گاؤں نیجاڈیلا کلاں نواسی ونود کمار,جوکہ موجودہ پنچائت میمبر بھی ہے۔31مئی2019کو وشال فرم مے.جان کی داس اینڈ سنس,سرکلر روڈ پر آیا اور اسنے اپنے آپ کو سوہنلال پتر راجیندر سنگھ نواسی کھیرپر کا نواسی بتایا اور ایک ایئر کولر کر جا پر لینے کے لئے آویدن کیا۔ جس پر فرم نے بجاج فائنینس لمٹیڈ سرسہ کے کاریالیہ میں سوچنا دی۔ جس پر وہ بجاج فائنینس لمٹیڈ کاریالیہ سے اپروکت فرم جان کی داس اینڈ سنس پر پہنچا اور وشال نے اپنے آپ کو سوہن لال پتر راجیندر سنگھ نواسی کھیرپر کے طور پر پرستت کیا تتھا اپنے آدھار کارڈ کی فوٹو پرتی و اپنے پین کارڈ کی فوٹو پرتی دی۔ تمام دستاویز جانچ کے بعد کمپنی نے وشال کو60ہزار رپئے کا کر جا سویکرت کیا اور ایئیمائی کارڈ31مئی2019کو جاری کیا۔ موقعے پر وشال کی فوٹو بھی لی گئی,جسے کمپنی نے اپنے سسٹم میں اپ لوڈ کیا۔ وشال کے نام سے کمپنی نے ایک لون کھاتا بھی اپنے کاریالیہ میں کھولا۔ اپروکت سبھی دستاویز تیار ہونے کے اپرانت پرارتھی نے ایک ایئر کولر31مئی2019کو اپروکت فرم مے.جان کی داس اینڈ سنس سرسہ سے12,500روپیے میں سوہن لال کے نام سے انوائس نمبر1285دوارہ خرید کی۔ جسمیں سے وشال نے مارجن منی کے طور پر4160روپے جمع کروایے تتھا بقایا راشی8333رپئے پرارتھی کمپنی دوارہ لون کے طور پر اسے دے دیا گیا۔ اسی پرکار وشال نے سوہن لال کے طور پر آن لائن کے مادھیم سے ایک47,480روپے کا20جون2019کو سمان خریدا,جسکی ادائیگی بھی اپروکت ایئیمائی کارڈ دوارہ لون کھاتے سے کی گئی,جس پر پرارتھی کا لون راشی کل55,413روپے ہو گیا,جوکہ اسنے دھوکا دھڑی کر غلط دستاویز کے آدھار پر پراپت کیا۔ جانچ میں وشال دوارہ دیئے گئے دستاویز فرجی پائے گئے۔ اسی پرکار دونوں نے مے.دہلی الیکٹرانک صدر بازار,مے.انڈیا ٹی وی اینڈ الیکٹرانک نزدیک گھنٹا گھر چوک سے بھی اسی پرکار فرجی دستاویزوں کے آدھار پر1.40لاکھ سے ادھک سے کا سامان خریدکر کمپنی کو چونا لگایا۔ اس طرح دونوں نے7پروڈکٹ خریدکر کمپنی کو1.97لاکھ رپئے کی چپت لگا دی۔ بینک ادھیکاری واسدیو نے بتایا که دونوں نے کچھ انیہ لوگوں کو بھی اپنی گینگ میں شامل کر رکھا ہے جو فرجی دستاویز دکھاکر کمپنی کی چھوی خراب کرنے کے ساتھ ساتھ آرتھک روپ سے بھی نقصان پہنچا رہے ہیں۔ جانچ ادھیکاری ستیش کمار نے بتایا که شکایت کے آدھار پر کیس درج کر لیا گیا ہے۔ جلد آروپیوں کا سراغ لگاکر قابو کیا جائیگا۔ ... اور پڑھیں

بجلی نگم نے شہر میں دو دنوں میں40سے زیادہ اپبھوکتاؤں کے کاٹے کنیکشن,اپبھوکتا نے کیا ہنگامہ

بجلی نگم کا شہر میں ڈپھالٹر اپبھوکتاؤں کے خلاف ابھیان جاری ہے۔ ابھیان کے تحت بیتے دو دنوں میں بجلی نگم نے اکیلے سٹی سب ڈویزن میں40سے زیادہ اپبھوکتاؤں کے کنیکشن کاٹ دیئے ہیں۔ ساتھ ہی15بجلی کے میٹر بھی اتار دیئے ہیں۔ حالانکہ پورے ضلعے میں نگم نے قریب200اپبھوکتاؤں کے کنیکشن کاٹے ہیں۔ پورے ضلعے میں بجلی نگم کا قریب دس کروڑ سے زیادہ ڈپھالٹر ایماؤنٹ پینڈنگ ہے۔ اکیلے سرسہ شہر میں یہ راشی دو سے تین کروڑ کے بیچ میں ہے۔
بجلی نگم نے بیتے دنوں شہر کی ایم سی کالونی,ایمائیٹیسی,حصار روڈ,برنالہ روڈ پر قریب40کنیکشن کاٹے۔ شہر میں بجلی نگم کی ٹیم نے جے ای کملیش,لائن مین سریندر کمار,دنیشن,آتمارام,سیمارام کے یہ ابھیان چلایا۔ ٹیم نے شہر میں6مہینے سے زیادہ کے پینڈنگ بل والے اپبھوکتاؤں کے کنیکشن کاٹے۔ ان اپبھوکتاؤں کا بل دس ہزار روپے سے زیادہ تھا۔ شکروار کو کنیکشن کاٹتے ہوئے ایمائیٹیسی کالونی میں ایک اپبھوکتا کے ساتھ تو بجلی نگم کے کرمچاری کی جھڑپ بھی ہو گئی۔ نگم کرمچاریوں کی سوچنا پر جے ای کملیش پہنچے اور جب انہوں نے ایف آئی آر کروانے کی چیتاونی دی تو اپبھوکتاؤں نے موقعے پر ہی17ہزار روپے کی آن لائن بل پیمینٹ کر دیا۔ اسی کالونی میں تین کیس ایسے ملے جنہوں نے کنیکشن کٹنے کے ڈر سے بل بھر دیئے۔ ان اپبھوکتاؤں کے بل12ہزار اور32ہزار روپے تھے۔
ایم سی کالونی کے نگم کاریالیہ میں اپبھوکتا نے کیا ہنگامہ:شکروار شام چار بجے بجلی نگم میں ایم سی کالونی کے اپبھوکتا کا کنیکشن کاٹ دیا گیا۔ شام کو وہ اپبھوکتا کچھ لوگوں کے ساتھ بجلی نگم کاریالیہ پہنچ گیا اور اسنے ہنگامہ کھڑا کر دیا۔ اپبھوکتا نے کہا که اسنے آن لائن15ہزار روپے کا بل بھرا ہے۔ پھر بھی اسکا کنیکشن کاٹ دیا گیا۔ اسکی سوچنا نگم کے ادھیکاریوں کے پاس بھی پہنچ گئی۔ نگم ادھیکاریوں نے جب اس سے آن لائن بل کی سلپ دکھانے کے لئے کہا تو اسکے پاس کچھ نہیں تھا۔ اسکے بعد وہ اپبھوکتا چیک سے پیمینٹ کرنے کی بات کہنے لگا,لیکن بجلی نگم کے ادھیکاریوں نے اسے کیش کاؤنٹر پر ہی بجلی کا بل بھرنے کے بات کہی۔
جولائی مہینے میں70کروڑ کا لکشیہ,ابھی ہوا33کروڑ: بجلی نگم نے ان دنوں جو کنیکشن کاٹنے اور بل وصولی کا ابھیان چلایا ہوا ہے وہ سیلس آف پاور کے تحت کیا جا رہا ہے۔ سرسہ سرکل نے جولائی مہینے میں قریب70کروڑ کی بجلی خرچ کی ہے۔ یعنی اپبھوکتاؤں کو اتنی راشی کے بل بانٹے گئے ہیں۔ اسلئے نگم کا لکشیہ اتنا پیسہ جٹانا ہے۔ نگم نے ابھی تک قریب33کروڑ کی راشی جٹائی ہے۔ ابھی بھی37کروڑ بقایا ہے۔ بجلی نگم نے لکشیہ جٹانے کے لئے شنیوار اور رویوار کو بھی کیش کاؤنٹر کھلے رکھنے کا فیصلہ لیا ہے۔
کہاں کاٹے کتنے کنیکشن: سرسہ میں قریب40,ایلناباد سب ڈویزن میں45,ناتھوسری چوپٹا میں20,رانیاں میں20,جیوننگر میں دس,اوڑھا میں40کنیکشن کاٹے گئے تتھا اوڑھا میں دس میٹر بھی اتارے گئے۔
کنیکشن کاٹنے کا ابھیان روٹین پرکریا ہے۔ نگم نے ابھی33کروڑ کا لکشیہ حاصل کیا ہے۔
رندھیر سنگھ,ایس ای,بجلی نگم سرسہ۔
... اور پڑھیں

نشہ چھوڑنے والوں کو سی ایچ سی میں داخل نہ کرنے پر روش,دھرنے پر بیٹھے

اوڈھاں میں نشے کے خلاف گٹھت کمیٹی نے سامدایک سواستھیہ کیندر میں نشہ چھوڑنے والوں کو داخل نہ کئے جانے کو لیکر روش ویکت کرتے ہوئے دھرنا پردرشن شروع کر دیا۔ دھرنے پر بیٹھے گرامینوں کو سی ایچ سی کے چکتسکوں نے کافی سمجھایا لیکن وہ نہیں مانیں۔ جسکے بعد ڈپٹی سول سرجن ڈا.روہتاش کمار نے موقعے پر پہنچ کر لوگوں کو آشواسن دیکر دھرنا سماپت کروایا۔
دراصل اوڈھاں میں بیتے دن گرامینوں نے نشے کے خلاف50سدسیہ کمیٹی کا گٹھن کیا تھا۔ جسکے بعد گاؤں کے آدھا درجن یووکوں نے سویچھا سے نشہ چھوڑنے کے لئے کمیٹی سے سمپرک کیا۔ کمیٹی اکت یووکوں کو ساتھ لیکر انہیں سی ایچ سی میں داخل کروانے پہنچی۔ لیکن موقعے پر موجود چکتسک گروندر سنگھ نے کہا که سی ایچ سی میں اکت یووکوں کا علاج نہیں کیا جا سکتا۔ کیونکہ اسکے لئے سرسہ کے ناگریک اسپتال میں الگ سے وارڈ بناکر وشیشگیہ چکتسک دوارہ علاج کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا که وہ اکت یووکوں کا1-2دن تک علاج تو کر سکتے ہیں,لیکن پھر بھی انہیں ناگریک اسپتال میں جانا پڑےگا۔ لیکن گرامینوں نے ایک سور میں کہا که وہ یووکوں کا علاج اوڈھاں سی ایچ سی میں ہی کروائینگے۔ کیونکہ سرسہ میں اچت دیکھ ریکھ نہیں ہوتی۔ ایسئیمؤ ڈا.بھوشن گرگ و ڈا.گروندر نے لوگوں کو کافی دیر تک سمجھایا لیکن لوگ اپنی بات پر اڑے رہے۔ جسکے بعد آکروشت گرامین مکھیہ دوار کے سامنے دھرنے پر بیٹھ گئے۔ کمیٹی سدسیہ کور سنگھ کنڈر,پورو سرپنچ درشن ملکانا,بھوپ سنگھ ملہان,گرجنٹ ساہو,بلکار سنگھ,جگتار سنگھ,رامپرتاپ گودارا,ہیرا سنگھ و دھرم ویر جاکھڑ نے کہا که ایک طرف تو سرکار نشہ چھڑوانے کے لئے ویاپک پربندھوں کے دعوے کر رہی ہے تو وہیں دوسری طرف سویچھا سے نشہ چھوڑنے والوں کو اپچار نہیں دیا جا رہا۔ انہوں نے کہا که جو یووک نشہ چھوڑنے کے لئے راجی ہوئے ہیں وہ دہاڑی مزدوری کرنے والے ہیں۔ وہ سرسہ کی بجائے اوڈھاں میں اپنا اپچار کروانا چاہتے ہیں۔ انکا کہنا ہے که وہ کچھ سمیہ پورو سرسہ کے ناگریک اسپتال میں نشہ چھوڈنے کے لئے گئے تھے۔ جہاں انکی کوئی دیکھ بھال نہیں کی گئی اور ان سے دوائیاں بھی باہر سے منگوائی گئی۔ وہ دوائیوں کا خرچہ نہیں اٹھا سکتے۔ گرامینوں نے کہا که اگر اوڈھاں سی ایچ سی میں نشہ چھڑوانے کے لئے چکتسک کی ویوستھا ہوتی ہے تو کافی راحت پردان ہوگی۔ کیونکہ یووک ستھانیہ ہونے کے کارن انکے پرجن بھی انکی دیکھ بھال کے لئے موقعے پر رہ سکتے ہیں۔ اسکے علاوہ وہ نشہ مکتی کمیٹی کے سمپرک میں بھی رہینگے۔ کمیٹی نے کہا که سی ایچ سی میں ویوستھا ہونے کے بعد شیتر کے بہت سے یووا اسکا لابھ اٹھاکر نشہ چھوڑکر سامانیہ جیون جی سکیں گے۔
ڈپٹی سول سرجن کے آشواسن پر دھرنا سماپت:دھرنے کی سوچنا پاکر ڈپٹی سول سرجن ڈا.روہتاش موقعے پر پہنچے۔ انہوں نے لوگوں کی سمسیا سنتے ہوئے کہا که اگر انکی یہیں پر نشہ چھڑوانے کی اچھا ہے تو انکا یہیں پر اپچار سنشچت کروا دیا جائیگا۔ انہوں نے کہا که سپتاہ میں ایک دن ناگریک اسپتال سے ڈا.پنکج کو اوڈھاں سی ایچ سی میں بھیجا جائیگا۔ جس پر لوگوں نے قریب2گھنٹے اپرانت دھرنا سماپت کر دیا۔
... اور پڑھیں

جو ودھایک انیلو چھوڑکر گئے ہے,انکی اتنی حیثیت نہیں تھی که وہ ودھایک بن جائیں: ابھے چوٹالا

انیلو کے ورشٹھ نیتا ایوں ایلناباد ودھایک ابھے سنگھ چوٹالا نے اپنے آواس پر پورو ودھایک بھاگیرام کے ساتھ بیٹھک کا آیوجن کیا۔ اس دوران انہوں نے سبھی کاریہ کرتاؤں کو چو.دیوی لال کے جنم دن25ستمبر کو کیتھل ریلی میں پہنچنے کا نیوتا دیا۔ ابھے سنگھ نے کہا که جنتا انیلو کو ستا میں لیکر آئیگی اور بھاجپا کو باہر پھینکنے کا کام کرییگی۔ جیجیپی کے ساتھ صلح کی بات پر ورام لگاتے ہوئے ابھے سنگھ نے کہا که جو ہم نے الگ ہوکر گئے تھے,تین پارٹیوں سے گٹھ بندھن کر لیا اور تینوں کو دھوکا دیا ہے۔ دھوکا دینے والے لوگوں پر کون وشواس کریگا۔ ابھے سنگھ نے کہا که رانیاں کے ودھایک رامچندر کمبوج اپنے دم پر ودھایک بن سکتا تھا کیا؟ مکھن لال سنگلا کی اتنی حیثیت تھی اور نہ ہی فتح آباد کے بلوان سنگھ دولتپریا کی اتنی طاقت تھی که وہ ودھایک بن جاتا۔ ہمنیں ان لوگوں کو گھر سے بلاکر ٹکٹ دیئے اور ودھایک بنایا تھا۔ جو بھی ودھایک پارٹی چھوڑکر گئے ہیں,دس دن میں ٹکریں مارکر واپس یہیں آ جا ئینگے۔ یہ وہ سوارتھی لوگ ہیں جو اس سمیہ میں پارٹی کا ساتھ چھوڑ گئے ہیں۔ پارٹی میں انکے لئے کوئی جگہ نہیں ہے۔ ابھے سنگھ نے کہا که جو ودھایک پارٹی چھوڑکر گئے تھے,انہیں جیند میں امت شاہ کی ہونے والی ریلی میں منچ سے دھکے مارکر نیچے اتارا گیا تھا۔ اسکی ویڈیو بھی بنی ہوئی ہے۔ یہ وہ لوگ ہیں جنہیں چاہے کوئی بھی اپمانت کریں,جوتے مارے,جوتے پہنائیں,انھیں فرق نہیں پڑتا۔ آپ دیکھنا جب چناؤ آئیگا,تب لوگ انکا کیسے ویلکم کرتے ہیں۔
پردیش میں جو75پار کی بات کرتے ہیں,اس پر جنتا انکو15پر لاکر روک دیگی۔ ہریانہ پردیش کی بھاجپا سرکار نے گنہگاروں کو سنرکشن دے رکھا ہے۔ سرکار کے ناک کے نیچے گنہگار اپرادھ کر رہیں ہیں۔ لیکن سرکار اس پر کوئی کارروائی نہیں کر رہی ہے۔ نشے پر بولتے ہوئے ابھے سنگھ نے کہا که ایک سمیہ تھا جب پنجاب کا یووا نشے میں کے کارن بدنام تھا اور آج یہی حال ہریانہ کے یوواؤں کا ہے۔ نشہ بیچنے والے کو سرکار سرنکشن دے رہی ہے جسسیے وہ نشہ بیچ رہے ہیں۔ ہریانہ پردیش میں جب ہماری سرکار آئیگی تب نشہ بیچنے والوں کے خلاف کڑی کارروائی کی جائیگی تتھا کڑے قانون بنائے جا ئینگے۔ ابھے نے کہا که ہریانہ کے پانچ ضلعے باڑھ کی چپیٹ میں ہیں۔ وہیں سرسہ کے کسانوں کو ابھی تک پانی نہیں پہنچ پایا ہے۔ ایلناباد کے جو کسان نہر میں دھرنے پر بیٹھے ہیں,وہاں پر ابھی تک سرکار کا کوئی نمائندہ نہیں پہنچا ہے۔ ابھے نے کہا که مینیں خود ادھیکاریوں سے بات کی ہے۔ ادھیکاریوں کا کہنا ہے که ہم سمادھان کرینگے۔ اگر کوئی سمادھان نہیں ہوا تو میں خود کسانوں کے ساتھ جاکر کھڑا ہوؤنگا تتھا اگر دھرنے پر بھی بیٹھنا پڑا تو میں تیار ہوں۔ پردیش کا سی ایم متداتا کو برگلانے کے لئے بس پر چڑھ گیا۔ لیکن پانچ سال کا ابھی تک کوئی کاریہ نہیں گنوا پایا۔ ووٹ کے لئے اب جنتا کو لبھانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔
... اور پڑھیں

بھوپیندر سنگھ ہڈا کو نہ تو بھاجپا سپورٹ کریگی اور نہ ہی پارٹی میں شامل کریگی: جین

ضلعے کے پانچوں ودھان سبھاؤں کے پارٹی پدادھکاریوں کی بیٹھک لینے کے لئے شکروار کو بھاجپا کے راشٹریہ مہا منتری عینو ہریانہ پر بھاری انل جین سرسہ پہنچے۔ بند حال میں پارٹی پدادھکاریوں سے انہوں نے ودھان سبھا پرتیاشی کے بارے میں پوچھا تو کائی جواب نہیں ملا۔ تب انل جین نے کہا که چناووں میں پارٹی پرتیاشی ہوگا کمل کا پھول,جس پرکار بارات میں دولہا ہی مکھیہ ہوتا ہیں باقی باراتی اسکے پیچھے چلکر ساتھ دیتے ہیں۔ اسی پرکار ودھان سبھا چناووں میں سبھی پدادھکاریوں کو پرتیاشی کا ساتھ دینا ہے۔ اس دوران امر اجالا نے انکے ساتھ وشیش بات چیت کی۔
سوال: ہریانہ میں ودھان سبھا چناووں میں90سیٹوں کے لئے کاریہ کرتاؤں سے آویدن لئے جا رہے ہیں۔ نیتاؤں میں ٹکٹ کے لئے ہوڑ ہے,ایسے میں پارٹی کسے توجو دیگی۔ چناوی گھوشنا پتر کیا ہوگا۔
سوال: جو جیتنے کی شمتا رکھتا ہوگا,پارٹی اسے ٹکٹ دیگی۔ پانچ سال میں کیندر سرکار اور راجیہ سرکار کی اپلبدھیاں ہی ہمارا گھوشنا پتر ہوگا۔
سوال: کانگریس نیتا اور پورو سی ایم بھوپیندر سنگھ ہڈا نے انوچھید370اور35اے کو ختم کرنے کا صحیح بتایا۔ کیا وہ اپنے اوپر چل رہے کیسوں کو ختم کروانے کے لئے ایسے بیان دیکر بھاجپا کے ساتھ نزدیکیاں بڑھاکر پارٹی میں شامل ہونا چاہتے ہیں۔ کیونکہ پرورتن ریلی میں وہ کانگریس کو پہلے والی کانگریس نہیں رہی,بیان دے چکے ہیں۔ کہیں یہ پورا گھٹناکرم بھاجپا کی رننیتی کا حصہ تو نہیں۔
جواب: ہریانہ سینکوں کی دھرتی ہے۔ اسلئے بھوپیندر سنگھ ہڈا نے انوچھید370کو ختم کرنے پر بھاجپا کے پکش میں یہ بیان دیا۔ وہ خود بھرشٹاچار کے معاملوں میں سنلپت ہے۔ اسلئے بھاجپا انہیں کبھی پارٹی میں شامل نہیں کریگی۔ یدی وہ کانگریس سے الگ ہوتے ہیں تو یہ انکا اور کانگریس پارٹی کا معاملہ ہے۔ کیونکہ اشوک تنور کے ساتھ انکا چھتیس کا آنکڑا ہے۔ ہڈا اپنا چناوی گھوشناپتر گھوشت کرکے,مکھیہ منتری کی دعویداری ٹھونک رہے ہیں۔ وہ کانگریس کے لئے چنوتی ہے۔ بھاجپا ہڈا کو سپورٹ نہیں کریگی اور نہ ہی کبھی شامل کریگی۔
سوال: ہریانہ میں بھاجپا ودھائکوں کو پارٹی میں شامل کر رہی ہے۔ نئے لوگوں کے آنے سے کیا پرانے کاریہ کرتا اپنے آپ کو کنٹھت محسوس کر رہے ہیں۔ انیلو کے ایک کے بعد ایک ودھایک کا بھاجپا میں شامل ہونا کسی رننیتی کا حصہ تو نہیں۔ یدی انیلو کا کوئی پرمکھ نیتا پارٹی میں آئینگے تو کیا انہیں بھی شامل کیا جائیگا۔
جواب: کسی بھی پارٹی کا وستار کرنے کے لئے دوسرے دلوں کے نیتاؤں کو شامل کرنا ضروری ہوتا ہے۔ تبھی وستار ہوتا ہے۔ پرانے کاریہ کرتاؤں اور نئے نیتاؤں کو آپس میں سامنسیہ بیٹھانا ہوگا۔ باقی ٹکٹ کا فیصلہ پارٹی کی کیندریہ کمیٹی کرتی ہے۔ بھاجپا گن دوش کے آدھار پر پارٹی میں شامل کرتی ہے۔ کسی شرط پر نہیں۔ انیلو کا بھی یدی کوئی پرمکھ نیتا شامل ہونا چاہیگا تو یہ کیس ٹو کیس پر نربھر کریگا۔
سوال: پنجاب میں شئد بھاجپا کا سہیوگی دل ہے۔ ہریانہ بھی بھاجپا کے ساتھ ہے۔ لیکن بیتے دنوں پنجاب کے پورو مکھیہ منتری پرکاش سنگھ بادل پورو سی ایم او پی چوٹالا کی پتنی سنیہ لتا کے شردھانجلی سماروہ میں پریوار کو ایکجٹ ہونے کی اپیل کرکے ہریانہ میں سرکار بنانے کی بات کہہ گئے۔ کیا شئد کا انیلو کی اور جھکاو ہو رہا ہے۔
جواب: دونوں پریواروں کے بیچ پریوارک رشتے ہیں۔ پنجاب میں شئد ہمارا سہیوگی دل ہے۔ لیکن ہریانہ میں ہمارا ابھی انکے ساتھ گٹھ بندھن نہیں ہوا۔ ابھی وچار کیا جا رہا ہے۔
سوال: کانگریس سرکار میں سپریم کورٹ نے سی بی آئی کو سرکاری طوطا کہا تھا۔ کیا بھاجپا بھی پی چندبرم کے خلاف اسی سی بی آئی کو سرکاری طوطے کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔
جواب: پی چدمبرم کے خلاف پہلے سے ہی جانچ ایجینسیا جانچ کر رہی تھی۔ اس کارروائی میں پارٹی کا کوئی رول نہیں ہے۔ پی چدمبرم کے پکش میں اتر کر کانگریس نے یہ ثابت کر دیا که وہ بھرشٹاچاریوں کو بچانے میں سہیوگ کرتی ہے۔ بھاجپا نیایہ پالکا میں وشواس رکھتی ہے۔
... اور پڑھیں

سیم شیتر کا پانی گھگر میں ڈالنے کے ورودھ میں چار گاؤوں کی پنچائت نے اپایکت کو سونپا گیاپن

حصارگھگر ڈرین میں سیم کا پانی ڈالنے کو لیکر ضلعے کے چار گاؤوں کے سرپنچوں نے ویروار کو اپایکت کو گیاپن سونپا۔ کسانوں نے اپایکت کو بتایا که مادھوسندھانا,موڈیا کھیڑا,گڈیا کھیڑا و بکریانوالی گاؤں کی قریب25ہزار ایکڑ زمین کی سنچائی ہوتی ہے۔ لیکن گاؤں دڑباکلا,ناتھوسری چوپٹا,لدیسر و شنکر مندوری میں ایک سیم کو دور کرنے کے لئے سور اور جا سے سنچالت قریب550سولر ٹیوبویل لگاکر سرکار سیم کے پانی کو حصار گھگر میں ڈالنے کی تیاریاں کر رہی ہے۔ اگر سیم کا پانی حصار گھگر ڈرین منگالا چینل میں ڈالا جاتا ہے تو گاؤں اپروکت چار گاؤوں کی ہزاروں ایکڑ بھومی بنجر ہو جائیگی۔
اپایکت نے سمبندھت وبھاگ سے اس معاملے کے بارے میں جانکاری لی۔ وبھاگ کے کرمچاریوں دوارہ پروجیکٹ کا چلانا تو مانا۔ لیکن اس سے کوئی نقصان ہونے کی بات کو انکار کیا۔ جسکے بعد اپایکت نے کرشی وبھاگ کو نردیش دیئے که اگر پروجییکٹ چل رہا ہے تو آس پاس کے گاؤوں کے لوگوں کو اسکی جانکاری دو۔ ہم پیسہ بھی لگا رہے ہیں اگر گاؤں کے لوگ ہی اسکا ورودھ کرینگیں تو صحیح نہیں ہوگا۔ اپایکت نے مادھوسندھانا,موڈیا کھیڑا,گڑیا کھیڑا و بکریانوالی کے لوگوں کی سمبندھت وبھاگ کے ساتھ ایک ساموہک بیٹھک کروانے کو کہا۔ تاکہ وہ آپ کو اس پروجیکٹ کے بارے میں پوری جانکاری دے سکیں۔ جس سے آپ کا و انکا تال میل بن جائے۔ ڈی سی نے کہا که ایسا نہ ہو که جتنا کام ٹھیک ہوگا,اسے زیادہ خراب کر دیں۔ ڈی سی نے کسانوں اور سرپنچوں کو ڈی ڈی اے بابو لال سے ملکر بیٹھک کرنے کے نردیش دیئے۔ کسانوں نے کہا که کوئی ایسا ستھائی راستہ نکالا جائے جس سے اپروکت گاؤوں کو پانی بھی ملتا رہے ساتھ ہی سیم کے علاقے کے پانی کا سمادھان کیا جا سکے۔ اگر منگالا چینل میں بڑی پائپوں کے ساتھ سیم علاقے کا پانی گھگر میں ڈالا جا سکتا ہے تو گھگر سے نالی کا پانی بھی بکریانوالی تک لایا جا سکتا ہے۔ جس سے اس معاملے کا ستھائی سمادھان ہو سکتا ہے۔
... اور پڑھیں

مارکیٹ کمیٹی رانیاں کا کرمچاری15ہزار کی رشوت لیتے وجلینس ٹیم نے پکڑا

رانیاں اناج منڈی کی دوکان کی رجسٹری اپنے نام کروانے کے لئے مارکیٹ کمیٹی کرمچاری انل کمار کو حصار وجلینس ٹیم نے رشوت لیتے رنگے ہاتھوں پکڑا ہے۔ بتایا جاتا ہے که اکت کرمچاری نے رجسٹری کے لئے انواریہ اخبار میں وگیاپن لگوانے کے لئے ان پیسوں کی مانگ کی تھی۔ وارڈ نمبر12کے نواسی رگھوبیر سنگھ پتر جگتار سنگھ نے حصار وجلینس کو شکایت دی که رانیاں اناج منڈی میں ستھت دوکان نمبر46اسکے دادا کے نام تھی۔ جن کا دیہانت ہونے کے بعد دوکان کی رجسٹری کا انتقال کروانے کے نام پر اکت کلرک نے40ہزار رپئے کی ڈیل فائنل کی تھی اور15ہزار رپئے ویروار دینے و شیش راشی25ہزار رپئے سوموار دینے کو تے کیا گیا۔ وجلینس انسپیکٹر سبھاش کمار نے بتایا که شکایت ملنے پر وہ رانیاں کاریالیہ کے پاس پہنچے اور شکایت کرتا کو نشانی لگے نوٹ جسمیں2000کے7نوٹ و500سو کے دو نوٹ اکت کرمچاری کو دینے کو کہا۔ جیسے ہی شکایت کرتا رگھوبیر سنگھ سے کرمچاری نے نوٹ پکڑے تو وجلینس ٹیم نے اکت کرمچاری کو رنگے ہاتھوں پکڑ لیا۔ وجلینس ٹیم اکت کرمچاری کو اپنے ساتھ لے گئی اور سرسہ وجلینس کاریالیہ میں کیس درج کر آگامی کارروائی آرمبھ کر دی ہے۔ ... اور پڑھیں
اپنے شہر کی سبھی خبر پڑھنے کے لئےamarujala.comپر جائیں

Disclaimer

اپنی ویب سائٹ پر ہم ڈاٹا سنگرہ ٹولس,جیسے کی ککیج کے مادھیم سے آپکی جانکاری ایکتر کرتے ہیں تاکہ آپ کو بہتر انبھو پردان کر سکیں,ویب سائٹ کے ٹریفک کا وشلیشن کر سکیں,کانٹینٹ ویکتیگت طریقے سے پیش کر سکیں اور ہمارے پارٹنرس,جیسے کیGoogle,اور سوشل میڈیا سائٹس,جیسے کیFacebook,کے ساتھ لکشت وگیاپن پیش کرنے کے لئے اپیوگ کر سکیں۔ ساتھ ہی,اگر آپ سائن اپ کرتے ہیں,تو ہم آپ کا ای میل پتہ,فون نمبر اور انیہ وورن پوری طرح سرکشت طریقے سے سٹور کرتے ہیں۔ آپ ککیج نیتی پرشٹھ سے اپنی ککیج ہٹا سکتے ہے اور رجسٹرڈ یوجر اپنے پروفائل پیج سے اپنا ویکتیگت ڈاٹا ہٹا یا ایکسپورٹ کر سکتے ہیں۔ ہماریCookies Policy, Privacy PolicyاورTerms & Conditionsکے بارے میں پڑھیں اور اپنی سہمتی دینے کے لئےAgreeپر کلک کریں۔

Agree
Web Tranliteration/Translation