Loading...
Karnataka Political Crisis: HD Kumaraswamy Seek Trust Votes, Karnataka MLA Latest News Political News [UPDATES] |سپریم کورٹ نے یتھاستھتی کا آدیش دیا,بہہ مت کے لئے سی ایم نے وقت مانگا;اب کیا ہوگا؟- Dainik Bhaskar
  • Hindi News
  • National
  • Karnataka Political Crisis: HD Kumaraswamy Seek Trust Votes, Karnataka MLA Latest News Political News [UPDATES]

کرناٹک/ سپریم کورٹ نے یتھاستھتی کا آدیش دیا,بہہ مت کے لئے سی ایم نے وقت مانگا;اب کیا ہوگا؟



مکھیہ منتری کمار سوامی۔ مکھیہ منتری کمار سوامی۔
سپیکر رمیش کمار۔ سپیکر رمیش کمار۔
Karnataka Political Crisis: HD Kumaraswamy Seek Trust Votes, Karnataka MLA Latest News Political News [UPDATES]
X
مکھیہ منتری کمار سوامی۔مکھیہ منتری کمار سوامی۔
سپیکر رمیش کمار۔سپیکر رمیش کمار۔
Karnataka Political Crisis: HD Kumaraswamy Seek Trust Votes, Karnataka MLA Latest News Political News [UPDATES]

  • کرناٹک ودھان سبھا میں سپیکر کو چھوڑکر کل223ودھایک,بہہ مت کے لئے ضروری آنکڑا112
  • 16باغی ودھائکوں کو ہٹاکر سرکار کے پاس100اور بھاجپا کے105ودھایک

Dainik Bhaskar

Jul 12, 2019, 09:03 PM IST
  • وشواسمت یتھاستھتی میں ثابت کرنا پڑا تو16باغی سرکار کے خلاف ووٹنگ کر سکتے ہیں,سرکار گر جائیگی
  • باغی ودھایک انوپستھت رہ سکتے ہیں,ایسے میں بھی سرکار گر جائیگی
  • باغیوں کے استعفے منظور ہوتے ہیں تو بھی سرکار گر جائیگی,کیونکہ ستا پکش کے ودھایک کم ہو نگے
  • 16ودھائکوں کو ایوگیہ ٹھہرایا جاتا ہے تو بھی سرکار گریگی,کیونکہ ستا پکش کی سیٹیں کم ہونگی
     

بینگلرو.کانگریسجیڈیئیس کے16باغی ودھائکوں کے استعفے کے معاملے میں سپریم کورٹ نے شکروار کو یتھاستھتی بنائے رکھنے کا نردیش دیا ہے۔ اس بیچ,مکھیہ منتری ایچ ڈی کمار سوامی نے ودھان سبھا ادھیکش رمیش کمار سے کچھ وقت کی مانگ کی ہے,تاکہ وہ سدن میں بہہ مت ثابت کر سکیں۔ ایسے میں سوال ہے که یتھاستھتی میں سوامی کو بہہ مت ثابت کرنا پڑا تو کیا ہوگا؟

 

 

 

Karnataka Political Crisis

 

 

یتھاستھتی میں وشواسمت ثابت کرنے پر کیا ہوگا؟

 

پہلی:16باغی ودھایک سرکار کے خلاف ووٹنگ کریں۔ اس ستھتی میں سرکار کے پکش میں100ووٹ پڑینگے۔ یہ سنکھیا بہہ مت کے لئے ضروری112کے آنکڑے سے کم ہے۔ ایسے میں کمار سوامی سرکار سدن میں وشواسمت کھو دیگی۔ سرکار کے خلاف ووٹ کرنے پر باغیوں کی سدسیتا ختم ہو جائیگی۔

 

دوسری:باغی ودھایک سدن سے انوپستھت رہیں۔ اس ستھتی میں وشواسمت کے سمیہ سدن میں سدسیہ سنکھیا207رہ جائیگی۔ بہہ مت کے لئے ضروری آنکڑا104کا ہو جائیگا۔ لیکن,باغیوں کی انوپستھتی میں سرکار کے پکش میں کیول100ووٹ پڑینگے اور سرکار گر جائیگی۔

 

تیسری:باغیوں کے استعفے منظور ہو جائیں۔ اس ستھتی میں بھی سرکار کو بہہ مت کے لئے104ودھائکوں کی ضرورت ہوگی,جو اسکے پاس نہیں ہو نگے۔ سرکار گر جائیگی۔

 

چوتھی:اگر ودھان سبھا ادھیکش باغیوں کو ایوگیہ ٹھہرا دیتے ہیں تو بھی سدن میں وشواسمت کے وقت سرکار کو بہہ مت کے لئے104کا آنکڑا چاہئیے۔ یہ اسکے پاس نہیں ہوگا۔ ایسے میں بھی سرکار گر جائیگی۔

 

16جولائی تک یتھاستھتی کے آدیش
استیفا سویکار نہ ہونے پر باغی ودھائکوں نے سپریم کورٹ میں یاچکا دائر کی تھی۔ سپریم کورٹ نے کہا که16جولائی تک یتھاستھتی بنائے رکھیں۔ باغی ودھائکوں کا پکش رکھتے ہوئے وکیل مقل روہتگی نے کہا که ودھان سبھا سپیکر رمیش کمار کچھ پرستھتیوں کو چھوڑکر عدالت کے پرتی جوابدہ ہیں۔ سپیکر استعفے پر فیصلہ لینے کی بجائے پریس کانپھرینس کر رہے ہیں۔ اس یاچکا پر اگلی سنوائی منگلوار کو ہوگی۔

 

پیسوں کا استعمال کر رہی بھاجپا راہل گاندھی
کرناٹک کو لیکر راہل گاندھی نے کہا که بھاجپا پیسوں کا استعمال کر راجیوں کی سرکار گرانے کی کوشش کر رہی ہے۔ وہ پہلے بھی ایسا کر چکے ہیں,ہم نے نارتھ ایسٹ میں بھی دیکھا تھا۔

 

سبھی ودھایک سدن میں موجود رہیں کانگریس
کرناٹک ودھان سبھا کانگریس کے نیتا گنیش ہکیری نے سبھی ودھائکوں سے شکروار سے شروع ہو رہے ودھان سبھا ستر میں شامل رہنے کو کہا ہے۔ ہکیری کے مطابق,کئی اہم بل سدن میں پیش کئے جا ئینگے,جو ودھایک اس دوران غیر موجود رہیگا اسے اینٹی ڈپھکیشن آل کے تحت اویدھ گھوشت کر دیا جائیگا۔

 

کانگریس کے13اور جیڈیئیس کے3ودھائکوں نے دیا استیفا
امیش کامتلی,بی سی پاٹل,رمیش جارکہولی,شوارام ہیبر,ایچ وشوناتھ,گوپالییا,بی بسوراج,نارائن گوڑا,منرتنا,ایس ٹی سوماشیکھرا,پرتاپ گوڑا پاٹل,منرتنا اور آنند سنگھ استیفا سونپ چکے ہیں۔ وہیں,کانگریس کے نلمبت ودھایک روشن بیگ نے بھی منگلوار کو استیفا دے دیا۔ بدھوار کو کے سدھاکر,ایمٹیبی ناگراج نے استیفا دیا۔

COMMENT

آج کا راشی پھل

پائیں اپنا تینوں طرح کا راشی پھل,روزانہ
Web Tranliteration/Translation