Loading...
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police |بھاجپا کاریہ کرتاؤں اور پولیس میں جھڑپ,وجیورگیہ نے کہا ممتا ہنسا کی راجنیتی کر رہیں- Dainik Bhaskar
  • Hindi News
  • National
  • Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya Mamata Banerjee doing politics of violence BJP workers and police

بنگال/ بھاجپا کاریہ کرتاؤں اور پولیس میں جھڑپ,وجیورگیہ نے کہا ممتا ہنسا کی راجنیتی کر رہیں



Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police
X
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police
Kolkata BJP Protest Updates: Kailash Vijayvargiya - Mamata Banerjee doing politics of violence - BJP workers and police

  • کاریہ کرتاؤں کی ہتیا کے ورودھ میں بھاجپا نے بدھوار کو کولکاتہ میں پولیس مکھیالیہ کا گھیراؤ کیا
  • پولیس نے کہا پردرشن کے دوران بھاجپا کاریہ کرتاؤں نے افسروں پر پتھراو کیا
  • بھاجپا کا آروپ پولیس کارروائی میں پارٹی کے کئی کاریہ کرتا زخمی ہوئے

Dainik Bhaskar

Jun 13, 2019, 12:30 PM IST

کولکاتہ. پچھم بنگال میں کاریہ کرتاؤں کی ہتیاؤں کے ورودھ میں بھاجپا نے بدھوار کو کولکاتہ کے لال بازار ستھت پولیس مکھیالیہ کا گھیراؤ کیا۔ اس دوران بھاجپا کاریہ کرتاؤں اور پولیس کے بیچ جھڑپ ہوئی۔ بھاجپا کا دعویٰ ہے که اس دوران اسکے کئی کاریہ کرتا زخمی ہوئے ہیں۔ 

 

بھاجپا کے مطابق,مقل رائے اور پارٹی کے پردیش مہاسچو راجو بنرجی بھی گھائل ہوئے ہیں۔ بنرجی کو اسپتال میں بھرتی کرایا گیا ہے۔ وہیں,رائے اب ٹھیک ہیں۔ ممتا سرکار کے خلاف ہوئے اس پردرشن میں بھاجپا کے سبھی18سانسد بھی موجود رہے۔ پارٹی کے مطابق,کاریہ کرتاؤں نے جیسے ہی لال بازار ستھت پولیس مکھیالیہ تک پہنچنے کی کوشش کی,پولیس نے آنسو گیس کے گولے داغے اور پانی کی بوچھار کی۔

 

بھاجپا کاریہ کرتاؤں نے پتھراو کیا پولیس

پولیس کے مطابق,بھاجپا کاریہ کرتاؤں دوارہ نعرے لگائے گئے اور پولیس افسروں پر پتھر اور بوتلیں پھینکی گئیں۔ وہیں,بھاجپا کا کہنا ہے که اسکے کسی بھی کاریہ کرتا نے پتھراو نہیں کیا۔ 

 

بھاجپا کے بڑھتے ہوئے جنادھار کو دیکھتے ہوئے ممتا نے مانسک سنتلن کھویا بھاجپا

بھاجپا مہاسچو کیلاش وجیورگیہ اور پردیش ادھیکش دلیپ سمیت انیہ نیتاؤں نے ہنسا کے ورودھ میں دھرنا پردرشن بھی کیا۔ وجیورگیہ نے کہا, ''مکھیہ منتری ممتا بنرجی راجیہ میں بڑھتے ہوئے بھاجپا کے جنادھار سے مانسک سنتلن کھو بیٹھی ہیں۔ وہ اپنی کرسی بچانے کے لئے ہنسا کی راجنیتی پر اتر آئیں ہیں۔ اگر ایسی ہی ستھتی رہی تو کیندر سرکار کو اس بات پر وچار کرنا چاہئیے که کیا کیا جانا چاہئیے یا نہیں؟''

 

راجیہ پال نے راجنیتک پارٹیوں کی بیٹھک بلائی

راجیہ پال کیشریناتھ ترپاٹھی نے گرووار کو بیٹھک بلائی ہے۔ اس میں پارتھو چٹرجی(ترنمول),دلیپ گھوش(بھاجپا),ایس کے مشرع(سیپیائی)اور ایس این مترا(کانگریس)موجود رہینگے۔

 

ممتا نے کہا تھا بنگال کو گجرات بنانے کی کوشش

مکھیہ منتری ممتا بنرجی نے منگلوار کو کہا تھا که راجیہ میں پھیلی ہنسا میں ترنمول کے8اور بھاجپا کے2کاریہ کرتا مارے گئے۔ یہ دربھاگیہ پورن ہے۔ انہوں نے کہا که بھاجپا بنگال کو گجرات بنانے کی کوشش کر رہی ہے۔ میں جیل جانے کے لئے تیار ہوں لیکن یہ نہیں ہونے دونگی۔ ممتا نے اسی دن کولکاتہ کے کالج سٹریٹ اور ودیاساگر کالج میں ایشورچندر ودیاساگر کی پرتما کا اناورن بھی کیا تھا۔

 

بھاجپا کا آروپ جے شری رام بولنے پر ہتیا
اتر24پرگنہ ضلعے میں سوموار کو ہوئے وسفوٹ میں2لوگوں کی موت ہو گئی۔ جبکہ چار گھائل ہو گئے۔ ادھر,بھاجپا نے آروپ لگایا ہے که جے شری رام کے نعرے لگانے پر ترنمول کانگریس کے کاریہ کرتاؤں نے پارٹی کاریہ کرتا کی گلا دباکر ہتیا کر دی۔ پولیس نے فی الحال ہتیا کے کارنوں پر کچھ نہیں کہا۔

 

وجیورگیہ نے کہا بنگال میں راشٹرپتی شاسن لاگو ہو سکتا ہے
بھاجپا مہاسچو کیلاش وجیورگیہ نے کہا تھا, ‘‘بنگال میں ہنسا کی ذمیداری ممتا بنرجی کی ہے۔ وہ بدلے کی بھاونا سے لوگوں کو بھڑکا رہی ہیں۔ ممتا اپنے کاریہ کرتاؤں سے کہہ رہی ہیں که جہاں سے انکی پارٹی ہار رہی ہے,وہاں بھاجپا کاریہ کرتاؤں کو نشانہ بنایا جائے۔ سارے غنڈے ستادھاری ترنمول کے پاس ہی ہیں,انکے پاس پستول اور بم ہیں۔ ہمارے کاریہ کرتاؤں کے پاس کوئی ہتھیار نہیں ہے۔ بنگال میں ایسے ہی ہنسا ہوتی رہی تو کیندر کو ہستشیپ کرنا پڑےگا۔ ضروری ہوا تو بنگال میں راشٹرپتی شاسن لاگو ہو سکتا ہے۔’’

 

بنگال کے چیف سیکریٹری نے کہا حالات نینترن میں
بنگال میں جاری ہنسا پر گرہ منترالیہ نے رویوار کو ایڈوائجری جاری کی تھی۔ اس میں ممتا سرکار کو ناگرکوں میں وشواس بنائے رکھنے میں وپھل بتایا۔ بنگال کے چیف سیکریٹری ملیہ کمار نے سوموار کو جواب دیتے ہوئے دعویٰ کیا ہے که راجیہ میں حالات نینترن میں ہیں۔ کمار نے پتر میں لکھا, ‘‘چناؤ کے بعد کچھ اساماجک تتووں دوارہ ہنسا کی گئی تھی۔ اس پرکار کے معاملوں کو روکنے کے لئے ادھیکاریوں دوارہ بنا کسی دیری کے کارروائی کی گئی۔’’

COMMENT
Web Tranliteration/Translation