Loading...
IPL 2019 Analysis: Chennai Super Kings IPl's Most Expensive Team, After spending 74 Crore RCB ended at the last position |چینئی سب سے مہنگی ٹیم,بینگلرو74کروڑ خرچ کرنے کے باوجود آخری ستھان پر رہی- Dainik Bhaskar
  • Hindi News
  • Sports
  • Cricket
  • IPL 2019 Analysis: Chennai Super Kings IPl's Most Expensive Team, After spending 74 Crore RCB ended at the last position

آئی پی ای اینالسس/ چینئی سب سے مہنگی ٹیم,بینگلرو74کروڑ خرچ کرنے کے باوجود آخری ستھان پر رہی

Dainik Bhaskar

May 15, 2019, 09:03 AM IST



IPL 2019 Analysis: Chennai Super Kings IPl's Most Expensive Team, After spending 74 Crore RCB ended at the last position
X
IPL 2019 Analysis: Chennai Super Kings IPl's Most Expensive Team, After spending 74 Crore RCB ended at the last position

  • چینئی نے اس سیزن میں23کھلاڑیوں کو رٹین کیا تھا
  • بینگلرو نے9کھلاڑیوں کو خریدا, 14کو رٹین کیا تھا
  • بینگلرو کی ٹیم لگاتار تیسرے سیزن میں پلیآپھ میں نہیں پہنچی

کھیل ڈیسک.آئی پی ای میں کھلاڑیوں پر خرچ کرنے کے معاملے میں چینئی اس سیزن کی سب سے مہنگی ٹیم رہی۔ اسکے کھلاڑیوں کی کل قیمت78.8کروڑ رپئے تھی۔ وہیں,اس سے4.8کروڑ کم خرچ کرنے والی رائل چیلینجرس بینگلرو کی ٹیم آخری ستھان پر رہی۔ چیمپیئن بنی ممبئی نے کھلاڑیوں پر77.95کروڑ رپئے خرچ کئے۔ وہ سیزن کی دوسری مہنگی ٹیم تھی۔ وہیں,دہلی کیپٹلس نے سب سے کم58کروڑ خرچ کئے۔

 

صرف دو ٹیموں کے کھلاڑیوں کی کل قیمت70کروڑ سے نیچے
دہلی کے علاوہ صرف حیدرآباد کی ٹیم ایسی تھی,جس نے کھلاڑیوں پر70کروڑ سے کم خرچ کئے تھے۔ حیدرآباد کے کھلاڑیوں کی کل قیمت69.75کروڑ تھی۔ اسنے اس نیلامی میں4.4کروڑ خرچ کئے,جبکہ دہلی نے17.6کروڑ خرچ کئے تھے۔ 

 

دہلی

 

پلیآپھ میں دہلی نے حیدرآباد کو ہرایا تھا
کھلاڑیوں پر کم خرچ کے باوجود دونوں ٹیموں کا پردرشن سیزن میں بہترین رہا۔ دہلی کی ٹیم جہاں2012کے بعد پہلی بار پلیآپھ میں پہنچی,وہیں حیدرآباد نے لگاتار تیسری بار انتم 4میں ستھان پکا کیا۔ ایلمنیٹر میں دہلی نے حیدرآباد کو ہرایا اور کوالپھایر 2میں چینئی نے اسے ہرا دیا۔

 

پنجاب نے13کھلاڑی خریدے,چھٹھے ستھان پر رہا
سیزن کی نیلامی میں پنجاب نے سب سے زیادہ13کھلاڑی خریدے,لیکن اسکے پردرشن میں زیادہ سدھار نہیں ہوا۔ وہ انک تالکہ میں پچھلے سال کی تلنا میں ایک ستھان اوپر چھٹھے نمبر پر رہی۔ پچھلے سال ساتویں ستھان پر تھی۔ ٹیم2014کے بعد سے پلیآپھ میں جگہ نہیں بنا سکی۔2014میں وہ پہلے ستھان پر تھی۔

 

رسیل

 

تین ٹیموں نے9-9کھلاڑی خریدے,صرف ایک پلیآپھ میں پہنچی
نیلامی میں دہلی,بینگلرو اور راجستھان ریلس نے پنجاب کے بعد سب سے زیادہ9-9کھلاڑی خریدے۔ ان تینوں میں صرف ایک ہی ٹیم دہلی پلیآپھ میں پہنچ سکی۔ بینگلرو ایک طرح جہاں آٹھویں ستھان پر رہی۔ وہیں,راجستھان کی ٹیم ساتویں نمبر پر رہی۔ راجستھان کو تو سیزن میں دو بار کپتان بھی بدلنا پڑا۔ پہلے اجنکیہ رہانے کپتان تھے,اسکے بعد سٹیو سمتھ بنے۔ سمتھ کے جانے کے بعد واپس رہانے کپتان بنے۔

 

تین ٹیموں نے ٹریڈنگ سے کھلاڑیوں کو نہیں بدلہ

ٹیم اس بار خریدے گئے کھلاڑی ٹریڈنگ سے ملے کھلاڑی  کل کھلاڑی پردرشن
ممبئی 6 1 24 وجیتا
چینئی 2 0 25 اپ وجیتا
دہلی 9 1 24 پلیآپھ
حیدرآباد 3 3 23 پلیآپھ
کولکاتہ 8 0 21 5واں ستھان
پنجاب 13 1 23 چھٹھا ستھان
راجستھان 9 0 25 7واں ستھان
بینگلرو 9 1 24 8واں ستھان


ٹریڈنگ ونڈو کیا ہے؟
آئی پی ای گورننگ کاؤنسل نے2018میں پہلی بار کھلاڑیوں کو بدلنے کی پرکریا شروع کی۔ یہ فٹبال کی طرح ہے۔ اس میں ایک کھلاڑی ایک ٹیم سے دوسری ٹیم میں جا سکتا ہے,لیکن اسکے کئی نیم ہیں۔

 

  • ٹریڈنگ دو بار کی جا سکتی ہے۔ پہلی سیزن کے پہلے اور دوسری سیزن کے بیچ میں۔
  • سیزن شروع ہونے سے پہلے کسی بھی کھلاڑی کی ادلا بدلی کی جا سکتی ہے۔ اسکے لئے ٹریڈ کئے جا رہے کھلاڑیوں کی سہمتی ضروری ہے۔
  • سیزن کے بیچ میں انہیں کھلاڑیوں کی ادلا بدلی ہو سکتی ہے,جو ایک بھی انترراشٹریہ اور سیزن کے دوران دو سے زیادہ میچ نہیں کھیلے ہو۔

 

اداہرن: دہلی نے ٹریڈنگ کے ذریعے حیدرآباد سے شکھر دھون کو لیا۔ حیدرآباد نے2018میں انہیں5.2کروڑ میں خریدا تھا۔ دھون کے بدلے حیدرآباد نے وجے شنکر(3.2کروڑ رپئے),ابھیشیک شرما(55لاکھ)اور شاہباج ندیم(3.20کروڑ)کو ٹیم میں لیا۔ اس طرح حیدرآباد نے6.95کروڑ رپئے میں تین کھلاڑی حاصل کر لئے۔ اسے دہلی کو1.75کروڑ رپئے دینے پڑے۔

COMMENT

کس پارٹی کو ملینگی کتنی سیٹیں؟اندازہ لگائیں اور انعام جیتیں

  • پارٹی
  • 2019
  • 2014
336
60
147
  • Total
  • 0/543
  • 543
کانٹیسٹ میں پارٹسپیٹ کرنے کے لئے اپنی ڈٹیلس بھریں

پارٹسپیٹ کرنے کے لئے دھنیواد

Total count should be

543
Web Tranliteration/Translation