Loading...
پانچواں سنسکار ہے نام کرن,جانئے کب,کیوں اور کیسے رکھیں بچے کا نام| Webdunia Hindi

پانچواں سنسکار ہے نام کرن,جانئے کب,کیوں اور کیسے رکھیں بچے کا نام


16سنسکاروں میں نام کرن سنسکار پنچم سنسکار ہے۔ یہ سنسکار بالک کے جنم ہونے کے گیارہویں دن میں کر لینا چاہئیے۔ اسکا کارن یہ ہے که پاراشر سمرتی کے انوسار جنم کے سو تک میں براہمن دس دن میں,کشتریہ بارہ دن میں,ویشیہ پندرہ دن میں اور شودر ایک ماس میں شدھ ہوتا ہے۔

ات اشوچ بیتنے پر ہی نام کرن سنسکار کرنا چاہئیے,کیونکہکے ساتھ منشیہ کا گھنشٹھ سمبندھ رہتا ہے۔ نام پر ائے دو ہوتے ہیں ایک گپت نام دوسرا پرچلت نام۔

جیسے کہا ہے که دو نام نشچت کریں,ایک نام نکشتر سمبندھی ہو اور دوسرا نام رچی کے انوسار رکھا گیا ہو۔


گپت نام کیول ماتا پتا کو چھوڑکر انیہ کسی کو معلوم نہ ہو۔ اس سے اسکے پرتی کیا گیا مارن,اچاٹن تتھا موہن آدی ابھچار قرم سپھل نہیں ہو پاتا ہے۔ نکشتر یا راشیوں کے انوسار نام رکھنے سے لابھ یہ ہے که اس سے جنم کنڈلی بنانے میں آسانی رہتی ہے۔ نام بھی بہت سندر اور ارتھپورن رکھنا چاہئیے۔ اشبھ تتھا بھدا نام کداپی نہیں رکھنا چاہئیے۔

اس سنسکار کو پر ائے دس دن کے سو تک کی نورتی کے بعد ہی کیا جاتا ہے۔ پارسکر گرہیسوتر میں لکھا ہےدشمیامتھاپیہ پتا نام کروتی۔ کہیں کہیں جنم کے دسویں دن سوت کا کا شدھکرن یگی دھارا کرا کر بھی سنسکار سمپن کیا جاتا ہے۔ کہیں کہیں100ویں دن یا ایک ورش بیت جانے کے بعد نام کرن کرنے کی ودھی پرچلت ہے۔

گوبھل گرہیسوترکار کے انوسارجننادرشراتر ویشٹے شتراترے سنوتسرے وا نامدھییکرنم۔ نام کرن سنسکار کے سمبندھ میں سمرتی سنگرہ میں لکھا ہے-

آیرویڈبھوردھشچ سدھرویوہتیستتھ ۔
نامکرمپھلں تویتت سمدشٹں منیشبھ ۔۔[2]

ارتھات نام کرن سنسکار سے آیو تتھا تیز کی وردھی ہوتی ہے ایوں لوکک ویوہار میں نام کی پرسدھی سے ویکتی کا الگ استتو بنتا ہے۔

اس سنسکار میں بچے کو شہد چٹاکر شالینتاپوروک مدھر بھاشن کر,سوریہ درشن کرایا جاتا ہے اور کامنا کی جاتی ہے که بچہ سوریہ کی پرکھرتا تیجسوتا دھارن کرے,اسکے ساتھ ہی بھومی کو نمن کر دیوسنسکرتی کے پرتی شردھاپوروک سمرپن کیا جاتا ہے۔ ششو کا نیا نام لیکر سب کے دوارہ اسکے چرنجیوی,دھرمشیل,سوستھ ایوں سمردھ ہونے کی کامنا کی جاتی ہے۔

بھارتیہ چنتن کے انوسار آتما اجر امر ہے۔ شریر نشٹ ہوتا ہے,کتں جیواتما کے سنچت سنسکار اسکے ساتھ لگے رہتے ہیں۔ بالک کس سمیہ,کس نکشتر,راشی آدی میں اتپن ہوا,یہ سب ایک نشچت ودھان کے انوسار ہوتا ہے۔ گھر کا پروہت یا پنڈت بالک کے جنم نکشتر,گرہ,راشی آدی کے انوسار بالک کے نام کرن کرتا ہے۔ والمیکی رامائن میں ورنت ہے که شری رام آدی چار بھایئوں کا نام کرن مہرشی گرگ دھارا شری کرشن کا نام کرن انکے گن دھرموں کے آدھار پر کرنے کا الیکھ ہے۔
نام کرن کے تین آدھار مانے گئے ہیں۔ پہلا,جس نکشتر میں ششو کا جنم ہوتا ہے,اس نکشتر کی پہچان رہے۔ اسلئے نام نکشتر کے لئے نیت اکشر سے شروع ہونا چاہئیے,تاکہ نام سے جنم نکشتر کا پتہ چلے اور جیوتشیہ راشی پھل بھی سمجھا جا سکیں۔ دوسرا,مولرپ سے ناموں کی ویگیانکتا بنیں اور تیسرا یہ که نام سے اسکے جاتنام,ونش,گوتر آدی کی جانکاری ہو جائے۔



اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation