Loading...
اوم پوری کے بارے میں25روچک جانکاریاں| Webdunia Hindi

اوم پوری کے بارے میں25روچک جانکاریاں

 1)  18اکتوبر1950کو پٹیالہ میں جنمے اوم پوری کا پورا نام اوم راجیش پوری تھا۔ پنجابی پریوار میں جنمے اوم پوری کے پتا بھارتیہ ریلوے اور آرمی میں کام کرتے تھے۔ 

2)اوم پوری نے فلم انڈسٹری میں لگ بھگ چالیس ورش کام کیا مراٹھی فلم'گھاسیرام کوتوال' (1976)سے انہوں نے اپنا کریر شروع کیا تھا۔
3)اوم پوری نے پنے کے فلم اینڈ ٹیلیویزن انسٹیٹیٹ آف انڈیا سے گریجیئیشن کیا۔ 
4)جب نصیر کے ساتھ اوم پوری نے اس انسٹی ٹیوٹ میں داخلہ لیا تو فلم ابھینیتری شبانہ اعظمی نے انہیں دیکھ منھ بناتے ہوئے کہا تھا که کیسے کیسے لوگ ہیرو بننے چلے آتے ہیں۔ 
5)اوم پوری اور نسیرودین شاہ نیشنل سکول آف ڈراما میں بیچمیٹ تھے۔ دونوں کی دوستی40سال سے ادھک سمیہ تک رہی۔ نصیر نے کئی بار اوم پوری کی آرتھک روپ سے مدد کی۔ اوم کا کہنا تھا که یدی نصیر مدد نہیں کرتے تو وہ یہاں تک کبھی نہیں پہنچ پاتے۔ 
 

 

اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation