Loading...
بھاجپا کا آروپ,کانگریس نے غریبوں کو ووٹ بینک سمجھا| Webdunia Hindi

بھاجپا کا آروپ,کانگریس نے غریبوں کو ووٹ بینک سمجھا

Last Updated: شنیوار, 12جنوری2019 (00:16 IST)
نئی دہلی۔ بھارتیہ جنتا پارٹی(بھاجپا)نے کیندر کی نریندر مودی سرکار کی غریبوں کو سوابھمان کے ساتھ کھڑا کرنے والی نیتیوں کی تعریف کرتے ہوئےکی شکروار کو آلوچنا کی که اسنے دیش میں55سال کے شاسن کے دوران ہمیشہ غریبوں کے لئے ٹکڑے پھینکے لیکن انکی غریبی دور کرنے کے لئے صحیح پریاس نہیں کئے۔
پردھان منتری نریندر مودی کی موجودگی میں یہاں رام لیلا میدان میں بھاجپا کےمیں غریب کلیان پرستاؤ پارت کیا گیا۔ ودیش منتری سشما سوراج نے غریب کلیان کا پرستاؤ پیش کیا۔ انہوں نے آرتھک روپ سے پچھڑے ورگوں کے لئے10پرتیشت آرکشن کے لئے سنودھان سنشودھن ودھیک پارت کئے جانے کا الیکھ کرتے ہوئے کہا که آزادی کے بعد سے غریبی کی ادھوری پر یبھاشا کو اس ودھیک کو پارت کراکے پورا کر دیا۔
سرکار نے انوسوچت جاتی,جنجاتی ایوں انیہ پچھڑے ورگ کے آرکشن کو چھیڑے بنا براہمن,ٹھاکر,قاپو,ویشیہ,پٹیل,مراٹھا آدی جاتیوں کو گریبو کے آنسو پونچھنے کا کام کیا ہے,اسکے لئے پردھان منتری مودی کوٹی کوٹی ابھینندن کے پاتر ہیں۔

انہوں نے غریبوں کے کلیان کے لئے مودی سرکار کے سمست کاریہ کرموں کا سار پرستت کرتے ہوئے کہا که آج کے سمیہ میں عام آدمی پڑھائی,دوائی,علاج آدی سمسیاؤں سے جوجھتے ہوئے جیون بتا دیتا ہے۔ اگر سرکار اسکے اس بوجھ کو کم کر دے تو آدمی نیتا کو دعائیں دیتا ہے۔ مودی کو بھی دیش کا غریب آدمی دعائیں دے رہا ہے۔
مانو سنسادھن وکاس منتری پرکاش جاوڑیکر نے بعد میں کہا که کانگریس کے زمانے میں بھی غریبوں کے لئے کچھ نہ کچھ یوجنائیں لائیں گئیں لیکن وہ یوجنائیں سانکیتک ہوتی تھیں اور ٹکڑوں ٹکڑوں میں ہوتی تھیں۔ جبکہ بھاجپا کا درشٹیکون الگ ہے۔ مودی کی سرکار نے غریبوں کے سشکتیکرن کے لئے کام کیا ہے۔ کانگریس غریبوں کوکی روپ میں دیکھتی رہی ہے اور چناؤ کے پہلے تھوڑا سا کچھ سہولیت دیکر ووٹ لیتی رہی ہے۔ لیکن بھاجپا کی مانیتا ہے که غریب کا وکاس کئے بنا دیش کا سنتلت وکاس نہیں ہو سکتا ہے۔
جاوڑیکر نے کہا که غریبوں میں ہنر ہے
لیکن انہیں اوسر نہیں ملے۔ بھاجپا انہیں اوسر دینے کی راجنیتی کرتی ہے۔ ہم اسے ہر بات کے لئے لالایت نہیں دیکھنا چاہتے ہیں بلکہ ہم ہر سہولیت اسکے گھر پر پہنچانا چاہتے ہیں اور اسے سوابھمان سے کھڑا کرنے والی نیتیوں پر کام کرتے ہیں۔ چاہے وہ پرتیکش لابھانترن ہو یا سوبھاگیہ یوجنا,اجولا یوجنا,آواس یوجنا,بیمہ سرکشا یوجنا,کوشل وکاس یوجنا یا پھر غریب سورنوں کو10پرتیشت آرکشن کی ویوستھا ہو۔

انہوں نے کہا که کانگریس نے30-40سال تک غریبی انمولن کے لئے سمگرتا کے درشٹیکون سے کام نہیں کیا۔ جبکہ بھاجپا کی سرکار نے ساڑھے چار سال میں کچھ نہ کچھ دینے کا پریاس کیا۔ انہوں نے کہا که ایسے23کروڑ لوگ ہیں,جنہیں مودی سرکار کی یوجناؤں سے کچھ نہ کچھ لابھ اوشیہ ہوا ہے۔

بعد میں10پرشٹھوں کے غریب کلیان پرستاؤ کو سروسمتی سے پارت کر دیا گیا۔ پرستاؤ میں پرتیکش لابھانترن,آدھار,جندھن,آرتھک سرکشا بیمہ,آیشمان بھارت,دواؤں کے داموں میں کمی ایوں جنوشدھی کیندر,مشن اندر دھنش ,ودیتیکرن,پردھان منتری آواس یوجنا,ان سرکشا یوجنا,بھرشٹاچار مکت منریگا,ڈھانچاگت وکاس, 10پرتیشت آرکشن,دویانگوں,مہلاؤں,آدیواسیوں کے سشکتیکرن کی یوجناؤں کا الیکھ کیا گیا اور کہا گیا که غریبوں کا آرتھک سبلیکرن کئے دیش نہیں بڑھ سکتا ہے۔ پرستاؤ میں ان قدموں کے لئے پردھان منتری نریندر مودی کا ابھینندن کیا گیا۔


اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation