Loading...
بڑی خبر,پترکار چھترپتی ہتیاکانڈ میں رام رحیم دوشی| Webdunia Hindi

بڑی خبر,پترکار چھترپتی ہتیاکانڈ میں رام رحیم دوشی

چنڈیگڑھ| Last Updated: شکروار, 11جنوری2019 (15:21 IST)
چنڈیگڑھ۔ پنچکولہ کی وشیش سی بی آئی کورٹ نے شکروار کو پترکار رامچندر چھترپتی ہتیاکانڈ میں ڈیرا سچا سودا پرمکھ رام رحیم سمیت چار لوگوں کو دوشی قرار دیا ہے۔ انہیں اس معاملے میں17جنوری کو سجا سنائی جائیگی۔

عدالت نے اس معاملے میں گرمیت رام رحیم کے ساتھ ہی تین انیہ لوگوں کو بھی دوشی قرار دیا گیا۔ اسکے مد نظر پنجاب ہریانہ کے کئی ضلعوں سمیت چنڈیگڑھ میں الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔ پنجاب کے مالوہ شیتر کے آٹھ ضلعوں کی سرکشا کے لئے25کمپنیاں تعینات کی گئی ہیں۔

ہریانہ میں وشیشکر پنچکولہ,سرسہ(ڈیرا مکھیالیہ)اور روہتک ضلعوں میں سرکشا کے پختہ انتظام کئے گئے ہیں۔ یہاں قانون ویوستھا سے جڑی کسی بھی ستھتی سے نپٹنے کے لئے راجیہ سشستر پولیس کی کئی کمپنیوں,دنگا ورودھی پولیس اور کمانڈو بل کو تعینات کیا جا رہا ہے۔
الیکھنیہ ہے که اگست2017میں رام رحیم کو سجا سنائے جانے کے دوران ہریانہ کے سرسہ اور پنچکولہ میں ہنسا بھڑک گئی تھی,جسمیں40سے زیادہ لوگوں کی موت ہو گئی تھی اور کئی لوگ گھائل ہو گئے تھے۔51ورشیہ رام رحیم اپنی دو انویایوں کے ساتھ بلاتکار کے جرم میں روہتک کی سناریا جیل میں20سال کی سجا کاٹ رہا ہے۔
سادھوی یون شوشن معاملے میں جو لیٹر لکھے گئے تھے۔ انہیں کے آدھار پر رامچندر چھترپتی نے اپنے اخبار میں خبریں پرکاشت کی تھیں۔ آروپ ہے که چھترپتی پر پہلے دباوٴ بنایا گیا۔ جب وہ آروپیوں کی دھمکیوں کے آگے نہیں جھکے تو24اکتوبر2002کو ان پر حملہ کر دیا گیا۔21نومبر2002کو دہلی کے اپولو اسپتال میں انکی موت ہو گئی۔
کیا ہے معاملہ:سادھوی یون شوشن معاملے میں جو پتر لکھے گئے تھے۔ انہیں کے آدھار پر رامچندر چھترپتی نے اپنے اخبار میں خبریں پرکاشت کی تھیں۔ چھترپتی پر پہلے دباوٴ بنایا گیا۔ چھترپتی نہیں جھکے تو بائک پر آئے کلدیپ نے24اکتوبر2002کو گولی مار دی تھی۔21نومبر2002کو دہلی کے اپولو اسپتال میں انکی موت ہو گئی۔ اسکے ساتھ نرمل بھی تھا۔ جس روالور سے رامچندر پر گولیاں چلائی گئیں,اسکا لائسینس ڈیرا سچا سودا کے منیجر کرشن لال کے نام پر تھا۔ گرمیت رام رحیم پر ہتیا کی سازش رچنے کا آروپ تھا۔

وگیاپن

اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation