Loading...
NRI Literature | Non Resident Indians | Indian NRI |این آر آئی ساہتیہ|آپکی قلم
0

پھادرس ڈے پر پرواسی کوتا:میرے پاپا

گرووار,جون13, 2019
0
1
مودی جی کا جلوہ دیکھو,وہ جیت گئے دوبارہ, 'چوکیدار چور ہے',بالکل جھوٹھا تھا وہ نعرہ۔
1
2
ناری تو ناراینی چلتا تجھ سے ہی سنسار ہے۔ ہے نازک اور سندر تو کتنی تجھ میں اوجسوتا اور سہجتا کا شرنگار ہے
2
3
سوچھ نیلا آکاش,چلچلاتی دھوپ,دیکھتا ہی رہ گیا,ششر کا یہ روپ۔ من مچلا که کیوں نہ,باہر گھوم آؤں,تاپمان رن تیس, ...
3
4
گھاس کی سختی جاتی سمٹتی آئی نمی اب واتاورن میں ننھی اونس کی بوندیں دھوپ میں چاندنی سی چمکے دم کے۔
4
4
5
یہ کیسی بسنت رتو دل پر چھائی,جب کومل وچاروں کی بیار بہتی آئی۔ سپنوں کی پنکھڑیوں پر دستک دی نندیا نے,نیلے آکاش تلے...
5
6
میں نے مندر دیکھا,مسجد دیکھی,چرچ دیکھا اور دیکھا گردوارہ, میں نے میرے پربھو سے پوچھا,سمجھا دو کیا ہے سارا ماجرا۔ تو...
6
7

پرواسی کوتا:مساپھرکھانا

سوموار,جنوری14, 2019
آنا جانا لگا ہوا ہے,یہ ہے مساپھرکھانا,تھوڑی دیر یہاں رکنا ہے,پھر ہے سب کو جانا۔ گٹھری رکھ کر سیدھا کر لوں,تھوڑا اپنا...
7
8
آئی کھچارہائی کہیں دیش کے ایک کونے میں کہتے لوگ اسے کھچارہائی, کہیں کہتے مکر سنکرانتی تو کہیں پتنگباجی کے لئے ہوتی اس میں...
8
8
9
رہ گئے ہیں اب کچھ پل,اس سال کے انت کے, ہونے والی ہے نئی صبح,سپنوں کے سنسار کی۔
9
10
کچھ ہی لوگوں سے سبھی کا ناطہ ہوتا ہے ناطہ آدرشوں کا,پریرنا کا,سیوابھاو کا,دیشپریم کے جذبے کا ایک ساروجنک ناطہ,ان...
10
11
کالے گھرے سے بادلوں کو,ہوا کے طوفانوں نے جدا کیا۔ جو برسنے کو تھے تیار انہیں,آندھی کے تھپیڑوں نے سکھا دیا۔
11
12
زندگی کی رفتار کو کچھ آگے بڑھاؤ,کھیلو خطروں سے نیا کچھ کر دکھاؤ۔ جو بیت گیا وہ تھا ہی بیتنے کے لئے,اسے بھول سارا...
12
13
چندرما کے درشن پر,افطار کے آمنترن پر۔ تزرید کے آورن میں,زہاد کے واتاورن میں۔
13
14
پرشوتم ماس کے دیوتا شری ہری وشنو ہیں۔ ات: جن کاریوں کے کوئی دیوتا نہیں ہے تو انکا دان بھگوان وش‍نو کو دیوتا...
14
15
ایپھل ٹاور کو نہارتی نظریں۔ پر خود میں ہی کھوئی ہوئی ہاتھوں میں پین اور ڈائری,شائد کچھ لکھنے کے پریاس میں۔ پارک میں اکیلی...
15
16
مجھے ہونے لگا ہے شبدوں سے پیار تم کرو یا نہ کرو میرا اعتبار۔ شبدوں کی کلیاں کھلنے لگی ہیں
16
17
کیا کبھی میں نے تم سے کہا کتنی تنہا ہوں میں مالا جپی رام ملا پھر بھی تنہا ہوں میں۔
17
18
پرواسی اپنی جڑوں سے دور برگد کی بھانتی پھیلتے ہیں اور ان جڑوں کو سینچتے ہیں بھارت کے سنسکاروں کے پانی سے۔
18
19
ہم آزاد بھارت کے باشندے ہیں,انگریزوں کو گئے کئی دشک بیت گئے,پر انگریزی اب بھی جندا ہے...
19


Web Tranliteration/Translation