Loading...
گوا میں کانگریس کو لگا جھٹکا, 10ودھایک بھاجپا میں شامل| Webdunia Hindi

گوا میں کانگریس کو لگا جھٹکا, 10ودھایک بھاجپا میں شامل

پن سنشودھت گرووار, 11جولائی2019 (20:51 IST)
نئی دہلی۔ گوا کے10 ودھائکوں نے گرووار کو یہاں بھاجپا کے کاریہ کاریجیپی نڈا سے ملاقات کی اور اپچارک روپ سے پارٹی میں شامل ہو گئے۔ کانگریس کے ان ودھائکوں نے بدھوار شام پارٹی سے الگ ہونے کا اعلان کیا تھا۔
یہگوا کے مکھیہ منتری پرمود ساونت کے ساتھ نڈا سے ملنے گئے۔ گوا میں بدھوار رات تیزی سے گھٹے راجنیتک گھٹناکرم میں کانگریس کے15ودھائکوں میں سے10نے الگ گٹ بناکر بھاجپا میں شامل ہونے کا اعلان کیا تھا۔

کانگریس سے الگ ہونے والے ودھائکوں کے نام چندر کانت کاولیکر,اٹاناسیو مونسیریٹ,جینپھر مونسیریٹ,نیل کانت ہلارنکر,ٹونی پھرناڈیس,فرانسس سلویریا,ولپھریڈ ڈی سا,فلپ نیری روڈگرگوج,کلاپھاسیو ڈیاس اور اسیڈور پھرناڈیس ہیں۔
مکھیہ منتری پرمود ساونت نے اس موقعے پر کہا که کانگریس کے باغی ودھائکوں کے بھاجپا میں شامل ہونے سے انکی پارٹی کو مضبوطی ملے گی۔ اس راجنیتک گھٹناکرم سے بھاجپا کے نیترتو والی گوا سرکار راجیہ میں اور مضبوط ہوگی۔

کانگریس کے باغی ودھایک ایوں ودھان سبھا میں وپکش کے نیتا چندر کانت کاولیکر نے اس اوسر پر کہا که ہم نے مکھیہ منتری ساونت کی کاریہ شیلی دیکھی ہے۔ وہ راجیہ کے وکاس کے لئے کام کر رہے ہیں۔ ہم نے انکا ساتھ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔
اس سے پہلے گرووار کو گوا اور کرناٹک کے راجنیتک گھٹناکرم کی گونج سنسد میں پہنچی اور کانگریس,درمک اور انیہ دلوں نے لوک سبھا سے بہرگمن کیا۔

 

اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation