Loading...
وراٹ,دھونی کی ناکامی میں دبی بھارت کی دتیچند کی انوکھی کہانی,سن کر بول پڑینگے جے ہند| Webdunia Hindi

وراٹ,دھونی کی ناکامی میں دبی بھارت کی دتیچند کی انوکھی کہانی,سن کر بول پڑینگے جے ہند

Last Updated: شکروار, 12جولائی2019 (10:46 IST)
ایک اور وشو کپ سیمی فائنل میں وراٹ کوہلی اور مہیندر سنگھ دھونی جیسے دگج ستاروں کی اسفلتا کی وجہ سے ٹیم انڈیا کرکٹ ورلڈ کپ سے باہر ہو گئی تو دوسری طرف بھارتیہ دھاوکانے اٹلی کے نیپلس میں30ویں ورلڈ ثمر یونیورسٹی گیمس کی100میٹر سپردھا میں سورن پدک جیت کر اتہاس رچ دیا۔ وہ یہ اپلبدھی حاصل کرنے والی دیش کی پہلی مہلا ایتھلیٹ بن گئی ہیں۔ دتیچند کی سپھلتا کی انوکھی کہانی سن کر آپ بھی جے ہند بول پڑینگے۔
محض11.32سیکنڈ میں رچا اتہاس: بھارتیہ دھاوکا نے11.32سیکنڈ میں ریس پوری کی اور وہ پہلے ستھان پر رہیں۔ انکے نام100میٹر میں11.24سیکنڈ کا راشٹریہ ریکارڈ بھی درج ہے۔ دوتی نے لکھا که کئی ورشوں کی محنت اور دعاؤں سے میں نے ایک بار پھر100میٹر میں ورلڈ یونیورسٹی گیمس میں سورن پدک جیتا ہے۔

تم مجھے جتنا پیچھے کھینچوگے,میں اتنی مضبوطی سے واپس آؤنگی:دتیچند نے مئی میں ہی اپنے سم لنگک ہونے کی بات کو ساروجنک کیا تھا,جسکے بعد وہ سرخیوں میں رہی تھیں۔ بھارتیہ دھاوکا نے اپنا پدک جیتنے کے بعد خوشی جتاتے ہوئے اسکی تصویر اور مسکٹ کے فوٹو کو ٹوٹّر پر ساجھا کرتے ہوئے لکھا, 'تم مجھے جتنا پیچھے کھینچوگے,میں اتنی مضبوطی سے واپس آؤنگی۔'

 

اور بھی پڑھیں:


Web Tranliteration/Translation