Loading...
دینک ٹربیون» Newsجیند جیتنے کے لئے میدان میں اترے‘مہارتھی’ -دینک ٹربیون

اچانا تحصیل میں پٹواریوں کے16پد رقت !    گائے کے نام پر ووٹ مانگتی ہے بھاجپا,لیکن چارہ نہیں دیتی !    قرض معافی,پانی,معاوضے کی مانگ پر کسانوں کا دھرنا شروع !    مکر سنکرانتی دوسرے دن بھی شردھالوؤں نے لگائی ڈبکی !    منریگا سکیم میں ہوئی لاکھوں کی دھاندھلی !    روی شنکر پرساد کو ایمس میں بھرتی کرایا گیا !    وت سچو کو ایک ماہ کا سیوا وستار !    سجن کی یاچکا پر سی بی آئی کو نوٹس !    پردوشن دور کرنے کو کرترم بارش کی یوجنا !    پٹاخے خریدنے کے لئے دکھانا ہوگا پہچان پتر !    

جیند جیتنے کے لئے میدان میں اترے‘مہارتھی’

Posted On January - 11 - 2019

جیند, 10جنوری(ہپر)

جیند میں برہسپت وار کو نام انکن داخل کرتے دگوجیہ چوٹالا۔ ساتھ ہیں سانسد دشینت چوٹالا و انیہ۔-ہپر

جیند اپ چناؤٔ کے لئے برہسپت وار کو ناماکنن کرنے کی آخری تاریخ کو سبھی پرمکھ دلوں کے پرتیاشیوں نے اپنے پرچے داخل کئے۔ کانگریس پرتیاشی رندیپ سرجیوالا,جننایک جنتا پارٹی(ججپا)کے پرتیاشی دگوجیہ چوٹالا,بھاجپا کے کرشن مڈڈھا اور انیلو کے امید ریڈھو نے نام انکن پتر داخل کیے۔
اس سے پہلے,سانسد دشینت چوٹالا نے پارٹی کاریالیہ میں پریسوارتا کر دگوجیہ چوٹالا کو پارٹی امیدوار بنانے کی گھوشنا کی۔ دشینت نے کہا که اسکے لئے پارٹی کاریہ کرتاؤں سے بھی رائے لی گئی تھی۔ انہوں نے کہا که چودھری دیوی لال کی کرمبھومی رہی جیند کی اس دھرا سے دگوجیہ پارٹی کے وجئی ابھیان کی شروعات کرینگے اور پردیش میں2019میں اگلی سرکار ججپا کی ہوگی۔ پارٹی کاریالیہ سے دگوجیہ سمرتھکوں کے پیدل چلکر لگھو سچوالیہ پہنچے اور نام انکن پتر سونپا۔ دگوجیہ کے ساتھ سانسد دشینت چوٹالا,سردار نشان سنگھ,ڈا.کیسی بانگڑ,پورو آئی رنبیر شرما,ودھایک انوپ دھانک,رام پال کریلا,آنند لاٹھر,جگدیپ بوانا موجود تھے۔

جیند میں اپ چناؤٔ کے لئے برہسپت وار کو نام انکن داخل کرنے پہنچے بھاجپا امیدوار کرشن مڈڈھا۔ انکے ساتھ ہیں شکشا منتری رامبلاس شرما و انیہ۔-ہپر

بھاجپا پرتیاشی ڈا.کرشن مڈڈھا کے نام انکن سے پہلے شہر کے ارجن سٹیڈیم میں سبھا کا آیوجن کیا۔ اس میں بھاجپا پردیش ادھیکش سبھاش برالا,شکشامنتری رامبلاس شرما,سونی پت سانسد رمیش کوشک,راجیہ سبھا سانسد ڈی پی وتس,پروہن منتری کرشن پنوار نے پارٹی پرتیاشی کی جیت کا دعویٰ کیا۔ رامبلاس شرما نے کہا که بھاجپا سرکار نے جو پچھلے چار سال کے دوران کام کیے ہیں,اسکے بل پر وہ جیند چناؤ جیتنے جا رہی ہے۔ وہیں,پورو منتری برج موہن سنگلا کے بیٹے انشل سنگلا نے نردلیہ پرتیاشی کے طور پر نام انکن بھرا۔
انیلو کے ودھایک ایوں پرتپکش نیتا ابھے چوٹالا نے پارٹی پرتیاشی ایوں جلا پریشد کے اپ پردھان امید سنگھ ریڈھو کو میدان میں اتارا ہے۔ نام انکن کے دوران خود ابھے چوٹالا لگھسچوالیہ پہنچے۔ ابھے نے کہا که جیند چودھری دیوی لال کی کرمبھومی رہی ہے اور یہاں کے لوگوں سے جو جڑاؤ ہے,اسکے نتیجاً ہی پارٹی کے ستھانیہ نیتا کو ہی میدان میں اتارا گیا ہے۔ اس موقعے پر انیلو پردیش ادھیکش اشوک اروڑہ,

جیند میں برہسپت وار کو پرچہ داخل کرتے کانگریس امیدوار رندیپ سرجیوالا۔ ہریانہ کانگریس کے سبھی دگج نیتا اس دوران انکے ساتھ تھے ۔-ہپر

جلانا کے ودھایک پرمندر سنگھ ڈھل و انیہ نیتا موجود رہے۔ ادھر,جیند اپ چناؤٔ کے لئے ورشٹھ آئی اے ایس ادھیکاری سوربھ بھگت کو سامانیہ آبجرور نیکت کیا گیا ہے۔

ہڈارامبلاس کے کٹاکش,لگے ٹھہاکے
جیند لگھسچوالیہ میں ستا پکش اور کانگریس نیتاؤں کا آمنہ سامنا ہوا تو وہ ایک دوسرے کے گلے ملے۔ پورو مکھیہ منتری بھوپیندر سنگھ ہڈا سے گلے ملتے ہوئے پورو شکشا منتری رامبلاس شرما نے وینگیہ چھوڑتے ہوئے کہا که ہڈا صاحب آپ کا کانٹا نکل گیا۔ اسکے جواب میں ہڈا نے کہا که کانٹا نہیں,وہ تو ہمارے دل کے قریب ہے۔ آپ بتائیں آپکی آنکھوں میں کانٹے بنے کھٹر ہٹ رہے ہیں یا نہیں۔ کانگریس آپکے کانٹے کو اس سال چلتا کرنے کا کام کر دیگی۔ دونوں نیتاؤں کے شبد بانوں سے وہاں ٹھہاکے لگنے لگے۔

42نام انکن پتر داخل

جیند میں برہسپت وار کو نیتا پرتپکش ابھے چوٹالا کی موجودگی میں نام انکن بھرتے انیلو پرتیاشی امید ریڈھو۔-ہپر

28جنوری کو ہونے جا رہے جیند اپ چناؤٔ کے لئے کل34امیدواروں نے42نام انکن پتر داخل کئے ہیں۔ ایس ڈی ایم ایوں جیند ودھان سبھا شیتر کے رٹرننگ ادھیکاری ویریندر سہراوت نے بتایا که کانگریس,جیجیپی,انیلو سمیت کئی امیدواروں نے2-2ناماکنن پتر بھرے ہیں,جبکہ بھاجپا کے کرشن مڈڈھا نے4ناماکنن پتر بھرے ہیں۔ ایسے میں34امیدواروں کے42ناماکنن پتر آئے ہیں۔ بھاجپا کے کرشن مڈڈھا,کانگریس کے رندیپ سرجیوالا,انیلو کے امید سنگھ ریڈھو اور ججپا کے دگوجیہ چوٹالا نے ناماکنن پتر بھرا۔ انہوں نے بتایا که راشٹریہ مزدور ایکتا پارٹی کی امیدوار شیلت,پپلس پارٹی آف انڈیا کی سنیتا,بھاجپا کے کو رنگ امیدوار ودیاوتی,امبیڈکر سماج پارٹی کے راجپال,نردلیہ مانگیرام,اوم پرکاش,راشٹریہ آزاد منچ کے پون جین,نردلیہ راجیندر سنگھ,انیلو کے کو رنگ امیدوار ستیندر سنگھ ڈھول,نردلیہ انسل کمار سنگلا,اشوک,ہرش کمار,رمیش نے پرچہ بھرا ہے۔ ساماجک نیائے پارٹی کے رادھے شیام,پپلس پارٹی آف انڈیا سے کرمویر,نردلیہ وجیندر,روندر کمار,رپبلکن آف انڈیا پارٹی کے امیدوار سنیل کمار,نردلیہ سندیپ کمار,سندیپ کمار پتر رام پھل,کمل کمار بھارتیہ ساماجک نیائے پارٹی امیدوار,نردلیہ سکھبیر سنگھ,انل کمار,امیدوار چرن سنگھ,انکش شرما,پربھاتیرام,ستپال,لوکتنتر سرکشا پارٹی سے ونود آشری,نردلیہ سریندر بیبیپور اور سنت دھرمبیر چوٹی والا نے ناماکنن پتر بھرے ہیں۔

ججپا جیتیگی جیند:اجے
سرسہ(نس) :جننایک جنتا پارٹی(ججپا)کے سنرکشک اجے چوٹالا نے کہا که ججپا جیند کا اپ چناؤٔ جیتیگی۔ انہوں نے کہا که کانگریس نے جیند میں بڑا چہرہ رندیپ سرجیوالا کو اتارا ہے,جو راہل گاندھی کی ٹیم سے ہیں,لیکن جیند کی جنتا تے کریگی که بڑا چہرہ کون ہے,کیونکہ ججپا چناؤ جیتنے جا رہی ہے۔ وہ برہسپت وار کو گاؤں ملڑی میں ہلوپا کالانوالی کے پرتیندھی نرمل سنگھ ملڑی کو ججپا جوائن کروانے کے بعد پترکاروں سے بات کر رہے تھے۔ اس موقعے پر ججپا کے ہلکا ادھیکش بھرپور سنگھ گدرانا,پورو سرپنچ جگتار دیسملکانا موجود تھے۔ شگنجیت کرنگاوالی,نردیو روڑی,سنیل اہلاوت موجود تھے۔

مٹ جائیگا کانگریس کا نامو نشان:کوتا
روہتک(ہپر/نس) :بال کلیان ایوں نگر نکائے منتری کوتا جین نے کہا که کانگریس کی اور سے جیند اپ چناؤٔ میں اترے رندیپ سرجیوالا نے کیتھل سے ودھایک ہوتے ہوئے کبھی ودھان سبھا میں حلقے کی آواز نہیں اٹھائی۔ انہوں نے کہا که جنتا جانتی ہے که سرجیوالا نے کبھی ودھایک کا فرج ادا نہیں کیا ہے۔ انہوں نے کہا که اپ چناؤٔ میں کانگریس کا نامو نشان مٹ جائیگا۔ کوتا جین روہتک میں نگر نگم میئر اور پارشدوں کے شپتھ سماروہ میں پہنچی تھیں۔ اس موقعے پر سہکارتا منتری منیش گروور نے کہا که سرجیوالا کو تو کانگریس نے بلی کا بکرا بنایا ہے۔ آج پردیش میں ستھتی یہ ہے که کانگریس کے پاس امیدوار ہی نہیں ہے۔

بھاجپا کے پاس اپنا پرتیاشی نہیں:سینی
شاہ آباد مارکنڈا(نس) :کروکشیتر سے سانسد و لوکتنتر سرکشا پارٹی سپریمو راج کمار سینی نے کہا که جب بھاجپا کو جیند اپ چناؤٔ کے لئے کوئی پرتیاشی نہیں ملا تو اسنے مڈڈھا کو ہائر کرکے اتار دیا,جس سے انہیں انکے پتا کی سہانبھوتی مل جائے۔ انہوں نے کہا که مڈڈھا کو سہانبھوتی لینی ہی تھی تو انہیں کے ساتھ رہنا چاہئیے تھا۔ انہوں نے کہا که جنتا سب جانتی ہے۔ انہوں نے کہا که کانگریس کو بھی جب پرتیاشی نہیں ملا تو موجود ودھایک کو ہی میدان میں اتار دیا۔ انہوں نے کہا که انکی پارٹی نے ونود آشری کو پرتیاشی بنایا ہے,جو ستھانیہ بھی ہیں۔

کرکٹ پچ سے راجنیتی کے میدان میں دگوجیہ

ججپا امیدوار دگوجیہ چوٹالا کرکٹ کی پچ کے بعد راجنیتی کے میدان میں اتر گئے ہیں۔ دگوجیہ نے سرسہ ستھت جننایک دیوی لال ودیاپیٹھ میں انتراشٹریہ سطر کا کرکٹ گرانؤڈ بنایا اور کرکٹ اکیڈمی ستھاپت کی۔ سرسہ کے اس گرانؤڈ میں انہوں نے کئی بار انتراشٹریہ سطر کی پرتیوگتاؤں کا آیوجن کروایا۔ دگوجیہ ان سو کے راشٹریہ ادھیکش ہیں۔ انہیں ان سو کے راشٹریہ ادھیکش کی جمیواری5اگست2013میں سونپی گئی تھی اور اسکے بعد انہوں نے راجنیتی کے شیتر میں پلٹ کر نہیں دیکھا۔ دگوجیہ چوٹالا کے نیترتو میں ان سو نے پردیش کے چھاتروں میں ایک نئی پہچان بنائی اور چھاتروں کے ادھیکاروں کے لئے ہر منچ پر لگاتار سنگھرش کیا۔


Comments Off onجیند جیتنے کے لئے میدان میں اترے‘مہارتھی’
1 Star2 Stars3 Stars4 Stars5 Stars (No Ratings Yet)
Loading...
Both comments and pings are currently closed.

Comments are closed.

سماچار میں حال لوکپریہ

Powered by : Mediology Software Pvt Ltd.
Web Tranliteration/Translation