Loading...
دینک ٹربیون» Newsریلگیٹ کے بہانے مودی کا بنسل پر پر ہار-دینک ٹربیون

راج مستری کی بیٹی کو راجیہ میں8واں,ضلعے میں تیسرا ستھان !    سنگاپور سے ووٹ ڈالنے بھارت آیا این آر آئی پریوار !    زیادہ تر ایگجٹ پول میں پھر مودی سرکار !    راشٹرپتی سے سمانت نیہا نے چھیڑی پانی بچانے کی مہم !    ایکدا !    بھدرواہ جانچ کے آدیش,کرفیو جاری !    ‘جج کے خلاف مہابھیوگ,سانسد کا نام نہیں بتا سکتے’ !    یوجیسی:یون اتپیڑن کے آنکڑے بتاییں !    دیش کی گوشالاؤں میں گؤئیں گہرے دباوٴ میں !    اندور میں بھاجپا کاریہ کرتا کی ہتیا !    

ریلگیٹ کے بہانے مودی کا بنسل پر پر ہار

Posted On May - 15 - 2019

چنڈیگڑھ سیکٹر34میں منگلوار کو پردھان منتری نریندر مودی کی وجے سنکلپ ریلی کے اتساہ میں بھاجپا سمرتھک۔-روی کمار

چنڈیگڑھ, 14مئی(ٹرنیو)
پردھان منتری نریندر مودی نے چنڈیگڑھ دورے کے دوران دشکوں تک دیش پر راج کرنے والی کانگریس پارٹی کو دیش میں ہوئے گھوٹالوں و بھرشٹاچار کے مدعے پر جم کر گھیرا۔ مودی نے منچ سے پون بنسل کا نام سیدھے طور پر تو نہیں لیا ۔ البتہ جب وہ کانگریس راج میں ہوئے گھوٹالوں پر کانگریسی نیتاؤں پر حملے کر رہے تھے تو انہوں نے ریل منتری کے رشتیداروں دوارہ بھرتی گھوٹالے کا مدعا منچ سے ضرور اٹھایا۔ مودی نے جیسے ہی منچ سے ریلگیٹ گھوٹالے کا نام لیا تو پنڈال میں موجود ہزاروں لوگوں نے ہاتھ کھڑے کرکے شیم شیم کے نعرے لگا دیئے۔ مودی نے کانگریس راج میں ہوئے کئی گھوٹالوں کا الیکھ کرتے ہوئے کہا که ریل منتری کے رشتےدار جب دیش میں بھرتیوں میں گھوٹالے کر رہے تھے تو نامدار و اسکے گینگ نے جہاں انہیں بچانے کا پورا پریاس کیا وہیں اس گھوٹالے کے پرتی سموچی کانگریس کی ایک ہی سوچ تھی,ہوا تو ہوا…۔

پنجاب کی اس راجدھانی میں آ کر مودی نے کانگریس کے ورشٹھ نیتا و راہل گاندھی کے صلاحکار مانے جانے والے سیم پترودا کے ہوا تو ہوا بیان کو لیکر بھی تنج قصہ۔ مودی نے کہا که ایک دور وہ بھی تھا جب دیش میں یوجناؤں کو پورا ہونے میں دشکوں لگ جاتے تھے۔ نجی سوارتھوں کے لئے ون رینک ون پینشن کو لٹکایا جا رہا تھا۔ کالے دھن کے کارن غریب کے ہاتھ سے اسکے گھر کا سپنا نکل رہا تھا۔ چھوٹے چھوٹے کمروں میں چار سو سے پانچ سو فرجی کمپنیاں چلاکر ہزاروں کروڑ کا حوالہ کروبار ہوتا تھا۔ مہنگائی کے کارن مڈل کلاس پریواروں کی کمر ٹوٹ رہی تھی اور کانگریس کے نامدار و انکے درباری سوچ رہے تھے که ہوا تو ہوا۔
اس اوسر پر آنندپر صاحب سے اکالی دل پرتیاشی پرو.پریم سنگھ چندوماجرا نے کہا که کانگریس نے اپنے کاریہ کال کے دوران گھوٹالے کرکے دیش کو کلنکت کیا ہے,جبکہ پردھان منتری مودی نے ودیشوں میں بھی دیش کا مان سمان بڑھایا ہے۔ اس اوسر پر پنجاب و چنڈیگڑھ بھاجپا پر بھاری پربھات جھا,چنڈیگڑھ کے چناؤ پر بھاری کیپٹن ابھمنیو,میئر راجیش کالیا,بھاجپا پردیش ادھیکش سنجے ٹنڈن,اکالی دل ادھیکش ہردیپ سنگھ,چناؤ سنچالن سمتی کے سنیوجک رامویر بھٹی,سہ سنیوجک ستندر سنگھ,پردیش مہاسچو چندرشیکھر و پریم کوشک,پورو میئر ارن سود سہت انیہ ورشٹھ نیتا شامل ہوئے۔ اس موقعے پر پارٹی پرتیاشی کرن خیر نے کہا که یہ چناؤ نرنائک چناؤ ہوگا۔ پردھان منتری مودی کی ٹیم دیش کے لئے وکاس کے دوار کھولنا چاہتی ہے اور کانگریس آتنکیوں کے لئے کورڈور کھولنا چاہتی ہے۔ خیر نے پون بنسل کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا که انہوں نے جو15سال میں نہیں کروایا,وہ پانچ سال میں کروا چکی ہیں۔

چنڈیگڑھ سیکٹر34میں منگلوار کو پردھان منتری نریندر مودی کی ریلی سے پورو کاریہ کرم ستھل کے باہر ورودھسوروپ پکوڑے بیچ رہے کانگریس کاریہ کرتاؤں کو حراست میں لیتے پولیس کرمی۔-دینک ٹربیون

مزدور یونین نے کیا پردھان منتری کا ورودھ
چنڈیگڑھ(ٹرنیو) :پردھان منتری نریندر مودی کی آج چنڈیگڑھ کے سیکٹر 34میں کی ریلی کا ورودھ کرنے پنجاب کی مزدور یونین کے سدسیوں نے کالے جھنڈے لیکر چنڈیگڑھ میں پرویش کرنے کا پریاس کیا۔ پولیس کے انوسار موہالی سے جب یہ لوگ چنڈیگڑھ میں پرویش کرنے کا پریاس کر رہے تھے تو انہیں بیرکیڈ لگاکر روکا گیا۔ چنڈیگڑھ پولیس نے ان پر آنسو گیس کے گولے داغے اور لاٹھی چارج کی۔ اس سے کئی لوگ گھائل ہو گئے۔ چنڈیگڑھ پولیس بیرکیڈنگ لگا کر کھڑی تھی۔ انہوں نے یونین سدسیوں پر پانی کی بوچھاریں ڈالی۔ جب پانی کی بوچھاروں سے بھی لوگ نہیں ہٹے تو انہوں نے آنسو گیس کے گولے داغے۔ جب لوگ پولیس سے دھکے مکے کرنے لگے تو پولیس نے لاٹھی چارج کر انہیں طتر بتر کیا۔ کانگرسیوں کی اور سے سڑک پر چائے پکوڑا بیچ کر ورودھ کیا گیا۔ سیکٹر 34کے ریلی گراؤنڈ کے باہر دوپہر کے سمیہ کچھ یوواؤں نے کالے رنگ کی ڈگری والے گاؤن پہن کر ہاتھوں میں پکوڑے لیکر ورودھ جتایا۔
رمنیت نے منیماجرا میں کی جنسبھا
چنڈیگڑھ(ٹرنیو) :بھارتیہ کسان پارٹی کی لوک سبھا امیدوار رمنیت نے آج یہاں منیماجرا کے شوالک پارک میں جنسبھا کو سمبودھت کیا۔ بعد میں وکاس نگر کے نواسیوں سے بھی ملاقات کی۔ انہوں نے ستھانیہ ناگرکوں کی سمسیائیں سنیں اور انہیں حل کرنے میں مدد کرنے کا آشواسن دیا۔ رمنیت نے چھوٹے ویوسایوں سے ووٹ اور سمرتھن دینے کے لئے کہا۔ انہوں نے کہا که یدی موجودہ ویوستھا کو بدلنا چاہتے ہیں تو انہیں جتائیں۔ انہوں نے کہا که بڑی اور پرانی پارٹیوں کے نیتا عام طور پر راشٹریہ مدعوں پر ووٹ مانگتے ہیں اور اکثر ستھانیہ مدعوں کی اپیکشا کرتے ہیں۔
کرن خیر کا نام لینا بھولے مودی
اپنے پورے بھاشن کے دوران پردھان منتری نریندر مودی نے یہ تو کہا که ورش2014کی بھانتی چنڈیگڑھ کے لوگ اس بار بھی بھاجپا کو ہی چنینگے پر وہ اپنی پرتیاشی کرن خیر کا نام لینا بھول گئے۔ کرن خیر نے پردھان منتری کے آنے سے پہلے بھی جنتا کو سمبودھت کیا۔ پردھان منتری کے آنے کے بعد جب منچ کا سنچالن کر رہے رامویر بھٹی نے انہیں پن بھاشن دینے کے لئے کہا تو انہوں نے بھاجپا ادھیکش سنجے ٹنڈن کی اور اشارہ کرتے ہوئے کہا که پہلے انہیں تو بولنے دیں۔ ریلی میں پرشوں کے ساتھ ساتھ مہلاؤں اور یوواؤں کی سنکھیا بھی امید سے ادھک تھی۔ ریلی میں شامل ہونے آئے یووا جہاں ہاتھوں میں ترنگا و اب کی بار پھر سے مودی سرکار کی تختیاں لئے ہوئے تھے وہیں کئی اتساہی یوواؤں نے اپنے چہرے پر پینٹ سے کمل کے پھول کا چنھ و مودی کے نام کی پینٹنگ بنائی ہوئی تھیں۔ مودی جب منچ پر پہنچے تو چنڈیگڑھ واسیوں نے موبائل کی لائٹ جلاکر انکا سواگت کیا۔ ریلی میں پہنچی کچھ یوتیاں اپنے کپڑوں پر کرن خیر و مودی کے کٹ آؤٹ چپکاکر آئی ہوئی تھی۔ پردھان منتری نریندر مودی نے اپنا بھاشن واہے گرو جی کا خالصہ جیکارے کے ساتھ شروع کیا۔ نوے کے دشک کے دوران نریندر مودی نے چنڈیگڑھ میں کئی سال بتائے۔ آج ریلی کے بعد چنڈیگڑھ میں پارٹی کے پدادھکاریوں کا ابھوادن کرتے ہوئے مودی ایک پرانے سہیوگی اور ان دنوں کے پریہ متر مدن جی کو پہچان کر پرسن ہو گئے۔


Comments Off onریلگیٹ کے بہانے مودی کا بنسل پر پر ہار
1 Star2 Stars3 Stars4 Stars5 Stars (No Ratings Yet)
Loading...
Both comments and pings are currently closed.

Comments are closed.

Powered by : Mediology Software Pvt Ltd.
Web Tranliteration/Translation